The news is by your side.

Advertisement

موٹر اور انجن کے بغیر گلائیڈر اڑانے کا حیرت انگیز ریکارڈ (ویڈیو)

کیلی فورنیا: امریکی ریاست کیلی فورنیا میں ایک شخص نے موٹر اور انجن کے بغیر 880 کلو میٹر فی گھنٹہ گلائیڈر اڑانے کا عالمی ریکارڈ قائم کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق کیلی فورنیا میں کسی جیٹ انجن، گھومتے پنکھوں اور کسی موٹر کے بغیر گلائیڈر کو صرف ہوا کے دوش پر 548 میل یا 880 کلو میٹر تک اڑانے کا کامیاب مظاہرہ کیا گیا ہے۔

اس عمل کو ’ڈائنامِک سورنگ‘ کہا جاتا ہے جس میں عموماً تیز ہوا والے اونچے مقامات مثلاً پہاڑوں کا انتخاب کیا جاتا ہے، پہلی مرتبہ ہوا کے دوش پر گلائیڈر کو اس رفتار پر اڑایا گیا ہے جو ایک ریکارڈ ہے۔

یہ گلائیڈر لاس اینجلس شہر کی شمال میں واقع پارکر پہاڑی سے اسے اڑایا گیا، اُس وقت ہوا 65 میل فی گھنٹہ کی رفتار سے چل رہی تھی۔

گلائیڈر پر نصب ایک آلے سے اس کی برق رفتاری کی تصدیق کی گئی، یہ ریکارڈ کیلی فورنیا کے اسپنسر لیزنبی نے اپنے نام کیا ہے، وہ ڈی ایس کنیٹک نامی کمپنی کے مالک بھی ہیں۔

اس گلائیڈر کی لمبائی 130 انچ یا تین اعشاریہ تین میٹر ہے، اس کےمضبوط پر کاربن سے بنے ہیں، اندازاً یہ 580 میل یا 933 کلومیٹر کی رفتار تک بھی جا سکتا ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ 20 برسوں میں ڈائنامک سورنگ ٹیکنالوجی میں بہت ترقی ہوئی ہے، اس میں باد حرکیات (ایئرو ڈائنامکس) کے اصولوں پر ایسے گلائیڈر بنائے جاتے ہیں جو کسی پہاڑی سے ہوائی جہاز گراتے ہی تیز ہوا کی بدولت اڑتے رہتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں