The news is by your side.

Advertisement

کینیڈا : مسلمانوں پر حملوں کے واقعات میں اضافہ کیخلاف بڑا اقدام

ساسکاٹون : کینیڈا میں شرپنسدوں کی جانب سے مسلمانوں کیخلاف نفرت انگیز واقعات میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے جس کیخلاف شہر کے میئر کی قیادت میں ریلی نکالی جائے گی۔

اس حوالے سے کینیڈین میڈیا کا کہنا ہے کہ گزشتہ سال کی نسبت اسلامو فوبیا کے واقعات میں 9فیصد اضافہ ہوا ہے، جس کے سبب مسلمان کمیونٹی میں شدید خوف و ہراس پایا جارہا ہے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ رواں ہفتے پاکستانی نژاد محمد کاشف کینیڈا کے شہرساسکاٹون میں حملے کانشانہ بنے، محمد کاشف کو 2سفید فام نسل پرستوں نے چاقو مار کر زخمی کیا، اور ان کی داڑھی مونڈھ دی۔

میڈیا کے مطابق سینٹ البرٹ میں نامعلوم افراد کی جانب سے دو مسلمان خواتین کو راہ چلتے دھکے دے کر ان کے سروں سے حجاب کھینچا گیا، اچناک حملے کے باعث وہ خواتین زمین پر گر پڑیں۔

اس کے علاوہ گزشتہ ماہ پاکستانی خاندان کے 4 افراد کو ایک دہشت گرد نے مسلمان ہونے کی پاداش میں جان بوجھ کر ٹرک تلے روند کرشہید کردیا تھا۔

کینیڈا میں بے گناہ مسلمانوں پر پے در پے ہونے والے حملوں اور اسلامو فوبیا کیخلاف کل ساسکاٹون میں ایک احتجاجی ریلی بھی نکالی جائے گی۔ جس کی قیادت شہر کے میئر خود کریں گے۔

مزید پڑھیں : کینیڈا میں مسلح افراد کا مسلمان شخص پر حملہ، داڑھی کاٹ دی

دوسری جانب پاکستانی نژاد ایسوسی ایٹ وزیر کلید رشید نے اسلامو فوبیا کے خاتمے کیلئے اقدامات کا آغاز کردیا ہے، ریاست اونٹاریو میں قائم اسکولوں میں اسلامو فوبیا روکنے کیلئے خصوصی فنڈنگ بھی مختص کی گئی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں