site
stats
عالمی خبریں

کینیڈین وزیراعظم کی خالصتان تحریک کے حامیوں کی تقریب میں شرکت، بھارت آگ بگولہ

ٹورنٹو: کینیڈا کے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو کی خالصتان تحریک کے حامیوں کی تقریب میں شرکت پر بھارت آگ بگولہ ہوگیا۔

ٹورنٹومیں سکھوں کے علیحدہ وطن کی تحریک چلانے والے سَنت سنگھ بھنڈرانوالہ کی یاد میں تقریب منعقد کی گئی تھی، جس میں کینیڈین وزیراعظم کے جانے پربھارتی میڈیا نے آسمان سرپراٹھا لیا۔

بھارتی میڈیا نے واویلا مچایا کہ تقریب میں خالصتان کے پرچم لہرائے گئے اور اس تحریک میں قتل ہونے والوں کویاد کیا گیا۔

خالصتان کے حامی سکھوں کی وزیراعلیٰ امریندر سنگھ کو دھمکی

یاد رہے  خالصتان کے حامی سکھوں کی وزیر اعلیٰ امریندر سنگھ کو دھمکی پر بھارت نے احتجاج کیا تھا اور بھارتی ہائی کمیشن نے کینیڈین دفتر خارجہ کو باضابطہ شکایت درج کرائی تھی۔

وزیر اعلیٰ امریندر سنگھ کو کینیڈا کے صوبے برٹش کولمبیا کے شہر سرے میں انتہاپسند سکھوں نے دھمکیاں دی تھیں، بھارتی ہائی کمیشن نے 22 اپریل کو سرے شہر میں بیساکھی پریڈ کے موقع پر خالصتان کے فلوٹس، علیحدگی پسند رہنما جرنیل سنگھ بھنڈرانوالہ اور اْس کے کلاشنکوف بردار ساتھیوں کی تصاویر کی نمائش پر بھی اعتراض کیا تھا۔

اونٹاریوکی اسمبلی نے گزشتہ ماہ انیس سوچوراسی میں بھارتی حکومت کے سکھوں کے قتل عام کونسل کشی قراردینے کی قرارداد بھی منظور کی تھی، اس قرارداد پر بھی بھارت کو تکلیف اٹھی تھی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top