The news is by your side.

Advertisement

ٹرمپ کی جسٹن ٹروڈو پر تنقید، کینیڈین عوام نے امریکی برانڈز کا بائیکاٹ کر دیا

ٹورنٹو : امریکی صدر کی ناقابل برداشت تجارتی پالیسیوں سے کینیڈین عوام بھی برہم ہوگئے، عوام نے امریکہ سفر کرنے سمیت امریکی برانڈز کا بھی بائیکاٹ کردیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکہ کی جانب سے شروع کی گئی تجارتی جنگ کے اثرات نظر آنے لگے، کینیڈا کے عوام نے بڑے بڑے امریکی برانڈز کا بائیکاٹ کر دیا جبکہ امریکہ کے سفر سے بھی گریز کر رہے ہیں۔

امریکی وزارت تجارت کے مطابق کینڈین سالانہ دو کروڑ ڈالر امریکہ آکر سیاحت پر خرچ کرتے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اس بائیکاٹ سے امریکہ کی برآمدات پر بھی منفی اثر پڑے گا، امریکہ سالانہ دو سو بیاسی ارب ڈالر کی اشیاء کینیڈا برآمد کرتا ہے۔


مزید پڑھیں: ڈونلڈ ٹرمپ نے کینیڈین وزیراعظم کو بے ایمان اورکمزورقرار دے دیا


یاد رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے جی 7 اجلاس کے بعد سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹرپراپنے پیغام میں کینیڈین وزیراعظم کو بے ایمان اور کمزور کہا تھا۔

جس کے بعد جسٹن ٹروڈو نے جی 7 کے اجلاس کے دوران بہت نرم مزاج اور نیک رویہ اختیار کیا اور امریکی ٹیرف کو تضحیک آمیز قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ ہمیں مزید نہیں دھکیلا جائے گا۔

خیال رہے رواں ماہ کے آغاز میں امریکا کی جانب سے اضافی محصولات کے ردعمل میں کینیڈا نے بھی امریکی درآمدی مصنوعات پر اضافی محصولات عائد کر دی تھی، کینیڈین حکومت نے امریکی امپورٹس پر دس سے پچیس فیصد تک کے اضافی ٹیکس نافذ کیا تھا۔

واضح رہے کہ امریکا نے رواں ماہ یکم جون سے اپنے ہاں یورپی اسٹیل اور ایلومینیم مصنوعات کی درآمد پر دس سے پچیس فیصد تک اضافی محصولات عائد کر دیے تھے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں