The news is by your side.

Advertisement

یوکرین میں روسی فوجی کو عمرقید کی سزا ملنے کا امکان

یوکرین میں گرفتار روسی فوجی کو جنگی جرائم کے الزامات پر عمر قید کی سزا سنائے جانے کا امکان ہے۔

خبر رساں ادارے کے مطابق روسی حملے کے دوران جنگی جرائم کے الزام میں یوکرین میں مقدمے کی سماعت کرنے والے روسی فوجی نے ٹرائل کے دوران اعتراف جرم کر لیا ہے جسے یوکرین کے دارالحکومت کیف میں ممکنہ عمر قید کی سزا کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

21 سالہ سارجنٹ وادیم شیشمرین کو عدالت میں جب الزامات پڑھ کر سنائے گئے کہ وہ جنگی جرائم اور پہلے سے سوچے سمجھے قتل کا قصوروار ہے تو ان سے ‘ہاں’ میں جواب دیا۔

فوجی پر روسی حملے کے اوائل میں شمال مشرقی یوکرین میں ایک 62 سالہ شہری کو ہلاک کرنے کا الزام ہے۔ دوران سماعت پراسیکیوٹر نے ملزم کے خلاف الزامات پڑھے تو ایک مترجم نے روسی زبان میں اس کا ترجمہ کیا۔

استغاثہ کا کہنا ہے کہ شیشیمارین ٹینک ڈویژن میں ایک یونٹ کی کمانڈ کر رہے تھے جب ان کے قافلے پر حملہ ہوا اس نے اور چار دیگر فوجیوں نے ایک کار چوری کی اور جب وہ چوپاکھیوکا کے قریب سفر کر رہے تھے تو ان کا سامنا ایک 62 سالہ شخص سے ہوا جو سائیکل پر تھے۔

استغاثہ کے مطابق شیشیمارین کو شہری کو قتل کرنے کا حکم دیا گیا تھا اور اس نے ایسا کرنے کے لیے کلاشنکوف اسالٹ رائفل کا استعمال کیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں