The news is by your side.

Advertisement

کارڈیلرزکا احتجاج، ڈپٹی کمشنر سے مذاکرات، ایک گاڑی کھڑی کرنے پر اتفاق

کراچی: کارڈیلرز ایسوسی ایشن نے نیو ایم اے جناح روڈ پر ٹریفک پولیس کے خلاف احتجاج کیا، ڈپٹی کمشنر سے مذاکرات کامیاب ہونےکے بعد سڑک کو ٹریفک کے لیے کھول دیا۔

 پولیس کے مطابق نیو ایم اے جناح روڈ پر کارڈیلرز ایسوسی ایشن نے ٹریفک پولیس کے خلاف احتجاج کیا، بعد ازاں کارڈیلرز ایسوسی ایشن اور ڈپٹی کمشنر کے درمیان کامیاب مذاکرات ہوئے۔

کارڈیلر ایسوسی ایشن اور ڈپٹی کمشنر کے درمیان ہونے والے مذاکرات میں یہ فیصلہ سامنے آیا کہ شوروم مالکان کو اپنی دکان کے آگے صرف ایک گاڑی کھڑی کرنے کی اجازت دی جائے گی جبکہ مالکان اپنی گاڑیوں فٹ پاتھ پر کھڑی کریں گے۔

ڈپٹی کمشنر نے شوروم مالکان پر واضح کیا کہ خلاف ورزی کی صورت میں قانونی کارروائی کی جائے گی اور پولیس سڑک پر کھڑی ہونے والی گاڑی اٹھا کر لے جائے گی، جس پر مالکان رضامند ہوئے اور مظاہرہ ختم کردیا۔

دوسری جانب شاہراہوں پر گاڑیاں کھڑی کرنے اور سرکاری زمین پر قبضے کی دفعات کے تحت 38شوروم مالکان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

یاد رہے گزشتہ دنوں وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے اعلیٰ سطح کا اجلاس طلب کیا تھا جس میں فٹ پاتھ کو کاروبار کے لیے استعمال کرنے والے مالکان کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی گئی، وزیر اعلیٰ سندھ نے حکام پر واضح کیا کہ فٹ پاتھ پر کھڑی ہونے والی گاڑیوں کے خلاف بھی کارروائی عمل میں لائی جائے جس پر پولیس نے سخت ایکشن بھی لیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں