نگراں وزیر اعظم کے دورہ سوات پر کروڑوں روپے کے اخراجات، حکومت کو نوٹس جاری -
The news is by your side.

Advertisement

نگراں وزیر اعظم کے دورہ سوات پر کروڑوں روپے کے اخراجات، حکومت کو نوٹس جاری

لاہور: صوبہ پنجاب کے دارالحکومت میں لاہور ہائیکورٹ نے نگراں وزیر اعظم ناصر الملک کے سوات کے دورے پر کروڑوں روپے کے اخراجات کی واپسی کے لیے دائر درخواست پر وفاقی حکومت کو دوبارہ نوٹس جاری کر دیے۔

تفصیلات کے مطابق نگراں وزیر اعظم ناصر الملک کے سوات کے دورے پر کروڑوں روپے کے اخراجات سے متعلق کیس پر جسٹس مامون الرشید شیخ نے بیرسٹر جاوید اقبال جعفری کی درخواست پر سماعت کی۔

عدالتی حکم کے باوجود وفاقی حکومت نے جواب داخل نہیں کروایا جس پر عدالت نے دوبارہ نوٹس جاری کردیے۔

درخواست گزار نے عدالت کو بتایا کہ نگران وزیر اعظم نے اپنی آبائی رہائش گاہ سوات جانے کے لیے 22 گاڑیوں کا استعمال کیا۔

درخواست گزار کا کہنا تھا کہ نگراں وزیر اعظم نے ریاستی ذمہ داری کے بجائے ذاتی امور کے لیے پروٹوکول استعمال کیا جس سے قومی خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنچا۔

درخواست میں کہا گیا کہ عدالت اس معاملے پر کارروائی کرے اور پروٹوکول پر اٹھنے والے اخراجات واپس سرکاری خزانے میں جمع کروانے کا حکم دے۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں