site
stats
پاکستان

پاکستان میں مردم شماری کا آغازمارچ2017سےہوگا

اسلام آباد:مشترکہ مفادات کونسل نے 15 مارچ 2017 سے پاکستان میں مردم شماری کے آغاز کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کےمطابق اسلام آباد میں وزیراعظم نواز شریف نے مشترکہ مفادات کونسل کے اجلاس کی سربراہی کی جس میں تمام صوبوں کے وزرائے اعلیٰ موجود تھے۔

اجلاس میں یہ بھی فیصلہ ہوا کہ مردم اورخانہ شماری اکٹھی کی جائے گی۔اجلاس کے بارے میں وزیر اعظم ہاؤس کی جانب سے جاری مختصر بیان میں کہا گیا ہے کہ مردم شماری دو مرحلوں میں مکمل کی جائے گی۔

یاد رہے کہ پاکستان میں آخری مردم شماری سنہ 1998میں ہوئی تھی۔اس طرح اب یہ عمل 20 سال بعد دوبارہ ہوگا۔

یاد رہے کہ چیف جسٹس انور ظہیر جمالی نے مردم شماری نہ کرانے پر ازخود نوٹس لیتے ہوئے اٹارنی جنرل کو طلبی کا نوٹس جاری کیا تھا جس میں پوچھا گیا تھا کہ کن وجوہات اور حالات کی وجہ سے حکومت نے مردم شماری موخر کی۔

مزید پڑھیں:سپریم کورٹ کا15مارچ سےمردم شماری کاآغازکرنےکاحکم

بعد ازاں یکم دسمبر کو سپریم کورٹ آف پاکستان نے2 ماہ میں مردم شماری مکمل کرنے کا حکم دیتے ہوئے حکومت سے کہا تھا کہ وہ تحریری طورپر یقین دہانی کرائے کہ مردم شماری 15 مارچ سے شروع ہوکر 15 مئی کو ختم ہوگی۔

واضح رہے کہ اقوام متحدہ کی نسلی امتیاز کے خاتمے سے متعلق کمیٹی نےگذشتہ دنوں پاکستان میں مردم شماری میں تاخیر پر تشویش کا اظہار کیاتھا

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top