The news is by your side.

Advertisement

مطیع الرحمان کی پھانسی عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے، چوہدری نثارعلی

اسلام آباد : امیر جماعت اسلامی بنگلہ دیش مطیع الرحمان نظامی کی پھانسی پر حکومت پاکستان نے اپنے شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے۔

وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثارعلی نے کہا ہے کہ مطیع الرحمان نظامی کی پھانسی غیر انسانی اور عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بنگلہ دیش میں جماعت اسلامی کے رہنماﺅں سے غیرانسانی سلوک کیاگیا، دنیا کی بنگلہ دیشی حکمرانوں کے اقدام کیخلاف خاموشی افسوس ناک ہے۔

بنگہ دیشی حکومت پاکستان سے وفاداری پر جماعت اسلامی کی شخصیات کو نشانہ بنا رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جماعت اسلامی نےپینتالیس سال پہلے بھی پاکستان سے وفا داری نبھائی۔

علاوہ ازیں دفتر خارجہ نے بھی بنگلہ دیش میں مطیع الرحمان نظامی کی پھانسی پر اپنے شدید رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ مطیع الرحمان نظامی کا گناہ صرف متحدہ پاکستان کی حمایت کرنا تھا۔

غیر منصفانہ ٹرائل کے ذریعے پھانسیاں دینا جمہوریت کی روح کے منافی ہے۔ ترجمان دفتر خارجہ کہنا ہے کہ انیس سو چوہتر میں بنگلہ دیش نے ایسے مقدمات نہ چلانے کا معاہدہ کیا تھا، اسے معاہدوں کی پاسداری کرنی چاہیے۔

دریں اثناء امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے مطالبہ کیا ہے کہ بنگلہ دیش میں گرفتار دیگر افراد کو بچانے کے لیے حکومت پاکستان اپنا کردار اداکرے۔

سزائیں بھگتنے والے رہنماﺅں اور شہادتیں دینے والوں کی پاکستان کیلئے خدمات ہیں ، انہوں نے کہا کہ پاکستانی سفیر کو مطیع الرحمان نظامی کی نماز جنازہ میں شرکت کرنی چاہئیے تھی۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں