The news is by your side.

Advertisement

میٹرک امتحانات میں نقل ، چیئرمین بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن کراچی نے ہاتھ اٹھا دیئے

کراچی : چیئرمین بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن کراچی سید شرف علی شاہ کا کہنا ہے کہ میٹرک امتحانات میں نقل کو روکنا اختیار میں نہیں ، ہمیں کیسے پتا چلے گا کہ کس علاقے سے پرچہ آؤٹ ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق چیئرمین بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن کراچی سید شرف علی شاہ کی جانب سے بیان میں کہا ہے کہ میٹرک امتحانات میں نقل روکنا سندھ بورڈ کے اختیار میں نہیں، حکومت نے دفعہ ایک سو چوالیس لگائی ، ہوسکتا ہے امتحان سے پندرہ منٹ پہلے پرچے کی تصویر کھینچ کر کوئی سوشل میڈیا پر ڈال دیتا ہو، چیک کرنا پولیس یا رینجرز کا کام ہے۔

سیدشرف علی شاہ کا کہنا تھا کہ سوشل میڈیا والے خود ہی بتادیں کون سا علاقہ ہے تو ہم کارروائی کریں، ہمیں کیسے پتا چلے گا کہ کس علاقے سے پرچہ آؤٹ ہوا ہے۔

خیال رہے کراچی سمیت سندھ بھر میں میٹرک کے امتحانات کا سلسلہ جاری ہے، آج ہونے والے پرچے میں طلبا کھلے عام نقل میں مصروف رہے، جسے بورڈ انتظامیہ روکنے میں مکمل طور پر ناکام ہے۔

یاد رہے محکمہ داخلہ سندھ نےامتحانی مراکز اوربورڈکےدفاترمیں دفعہ144 نافذ کردی ہے اور امتحانی مراکزمیں غیرمتعلقہ افرادکاداخلہ ممنوع قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ امتحانی مراکزمیں موبائل فون لےجانےپربھی پابندی ہوگی جبکہ امتحانی مراکزکےقریب فوٹواسٹیٹ کی دکانیں کھولنےپربھی پابندی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں