site
stats
پاکستان

چیئرمین نیب کی تقرری عدالت میں چیلنج

Chairman Nab

لاہور :چیئر مین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی تعیناتی کو لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کر دیا گیا‘ درخواست میں کہا گیا ہے کہ تقرری میں قانونی تقاضے پورے نہیں کیے گئے۔

تفصیلات کے مطابق درخواست بیرسٹر جاوید اقبال جعفری کی جانب سے دائر کی گئی ہے‘ جس میں موقف اختیار کیا گیا کہ جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی تعیناتی میرٹ پر نہیں کی گئی۔

درخواست گزار کا کہنا ہے کہ اسامی پر تعیناتی سے قبل قانون کے مطابق اخبار میں اشتہار دیا گیا اور نہ ہی سرچ کمیٹی بنائی گئی جو میرٹ کی خلاف ورزی ہے ۔

جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال چیئرمین نیب تعینات

بیرسٹر اقبال جعفری نے موقف اختیار کیا ہے کہ حکومت اور اپوزیشن لیڈر نے اپنی مرضی سے چیرمین نیب کو تعینات کیا ‘ اس میں اپوزیشن کی دیگر جماعتوں سے بھی مشاورت نہیں کی گئی‘ جو قوانین کی صریحاًخلاف ورزی ہے اور اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ پسند نا پسند کی بنیاد پر تعیناتی کی گئی ہے۔

عدالت میں دائر کردہ درخواست میں کہا گیا ہے کہ نئے چیئرمین نیب ایبٹ آباد کمیشن کے سربراہ رہے‘ مگر انہوں نے رپورٹ کو منظر عام پر لانے کے احکامات نہیں دیے۔ درخواست گزار نے استدعا کی کہ نئے چیرمین نیب کی تعیناتی کو کالعدم قرار دیتے ہوئے میرٹ پر نئی تقرری کا حکم دیا جائے۔

یاد رہے کہ گزشتہ اتوار کو اپوزیشن کی مشاورت سے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے جسٹس (ر) جاوید اقبال کو چیئرمین نیب مقرر کرنے کی منظوری دے دی تھی اور باقاعدہ مراسلہ بھی جاری کیا گیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top