The news is by your side.

Advertisement

نیب کی وجہ سے بیوروکریسی کے کام نہ کرنے کے پروپیگنڈے کو رد کرتا ہوں: جاوید اقبال

اسلام آباد: چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا ہے کہ ہماری وجہ سے بیوروکریسی کے کام نہ کرنے کے پروپیگنڈے کو رد کرتا ہوں.

ان خیالات کا اظہار  انھوں نے نیب افسران سے خطاب کرتے ہوئے کیا. ان کا کہنا تھا کہ نیب آپ سب کا اپنا ادارہ ہے، نیب ایسااقدام کیوں اٹھائے گا، جس سے ملکی معیشت برباد ہو.

نیب ایسااقدام کیوں اٹھائے گا، جس سے ملکی معیشت برباد ہو.

چیئرمین نیب

چیئرمین نیب نے مزید کہا کہ بیوروکریسی اگرفیصلے نہیں کرے گی، تو ہم آگے کیسے چلیں گے، بیوروکریسی ملک کی ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے، حکومت صرف پالیسی بناتی ہے، عمل درآمد بیوروکریسی کا کام ہے.

انھوں نے کہا کہ ہماری وجہ سے بیوروکریسی کے کام نہ کرنے کے پروپیگنڈے کو رد کرتا ہوں، شواہد سے ثابت کروں گا، جو میں کررہا، ہو وہ درست ہے،1435 نیب ریفرنسزمیں فقط چند درجن ہی بیوروکریٹس شامل ہیں.

مزید پڑھیں: میگا کرپشن کے مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا اولین ترجیح ہے، چیئرمین نیب

ان کا کہنا تھا کہ جمہور عوام ہیں، نیب کا مقصد جمہور کی خدمت ہے، پاکستان 98 ارب ڈالر کا مقروض ہے، اسپتالوں، یونیورسٹیز، لوگوں کے روزگارکی حالت دیکھ لیں.

چیئرمین نیب نے سوال کیا کہ یہ قرضے کہاں لگائے گئے، غربت کی لکیر سے نیچے 50 فی صد سے زائد لوگ زندگی گزاررہے ہیں، وہ انصاف کے حق دار ہیں.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں