The news is by your side.

Advertisement

پاکستان اب مزید کوئی آمریت برداشت نہیں کرسکتا، رضا ربانی

لاہور : چیئرمین سینیٹ رضا ربانی کہا ہے کہ صرف سیاستدانوں کو کرپٹ کہنا درست نہیں، پاکستان کی سول اور ملٹری اشرافیہ پاک اور پوتر نہیں ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے لاہور میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا، رضا ربانی کا کہنا تھا کہ احتساب سب کا ہونا چاہیے۔۔یہ طریقہ کار نہیں چلے گا کہ سیاست دانوں کے لئے خصوصی اور باقیوں کے عام عدالتیں قائم کی جائیں۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی پارلیمان تمام اداروں سے بالاتر ہے اس لئے تمام اداروں کو پارلیمان کے تابع ہونا چاہئے اور مل کر قومی ترجیحات کا تعین کرنا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان اب مزید کوئی آمریت برداشت نہیں کرسکتا ۔نیشنل سکیورٹی کونسل کا تجربہ پٹ چکا ہے۔ مشرف کے دور میں نیشنل سیکیورٹی کونسل کا تصور آزمایا جا چکا ہے جو ناکام ہوا اور اب پاکستان مزید تجربات کا متحمل نہیں ہو سکتا۔

انہوں نے کہا کہ نظام کی مضبوطی اور ترقی کیلئے تمام اداروں کے درمیان ڈائیلاگ کا آغاز لازم ہے اور تمام اداروں کو مل کر قومی ۔ترجیحات کا تعین کرنا چاہئے،رضا ربانی کا کہنا تھا کہ کوئی اچھا طالبان نہیں، ہمیں پاکستان کی بقا کے لئے مل کر لڑنا ہوگا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں