site
stats
سندھ

دہشت گردی ایک یا دو آپریشن سے ختم نہیں ہوگی، رضا ربانی

لاڑکانہ : چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا ہے کہ پانی کے معاہدے کے معاملے پر ورلڈ بینک اور عالمی قوتیں اپنا کردار بہتر طریقے سے ادا نہیں کررہی ہں، انڈیا کو اگر لاڈلا بچہ قرار دیا گیا تو اس کی اجازت نہیں دیں گے، پانی بند کیا گیا تو اسے جنگ تصور کیا جائے گا۔

یہ بات انہوں نے گڑھی خدابخش بھٹو میں پیپلز پارٹی کے صوبائی صدر نثار کھوڑو، سعید غنی، وقار مہدی اور دیگر کے ہمراہ شہید ذوالفقار علی بھٹو، شہید محترمہ بینظیر بھٹو اور دیگرشہداء کی مزاروں پر حاضری کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ پرویز مشرف جیسے شخص کا اس مقدس مزار پر نام لینے پر شرمندہ ہوں لیکن اس شخص نے غلط بیانات دے کر فوج اور عدلیہ کو متنازعہ بنانے کی کوشش کی ہے دونوں ادارے آئین کے مطابق بہتر کام کررہے ہیں۔

میاں رضا ربانی نے کہا کہ اس خام خیالی میں نہیں رہنا چاہیے کہ دہشت گردی ایک یا دو آپریشن یا کچھ دنوں میں ختم ہوجائے گی اسے ختم کرنے کے لیے طویل جدوجہد کرنے پڑے گی جب تک ہم منفی سوچ کے خلاف نہیں لڑیں گے اس وقت تک دہشتگردی کو جڑوں سے اکھاڑنا مشکل ہے۔

انہوں نے کہا کہ پوری قوم کو چاہیے کہ پاکستان کے جس بھی حصے میں رہیں وہ دہشتگردی، فرقہ واریت اور لسانی قوتوں کے خلاف یکجا ہوکر آگے بڑھیں۔

چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا کہ ریگولیٹری اتھارٹیوں کو وزارتوں کے ماتحت کرنے پر وزیر قانون نے سینٹ میں قانونی پہلو پر بات کی ہے، جس پر میری رولنگ محفوظ ہے جو میں اگلے سیشن میں دوں گا۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی وزراء سینٹ کے اجلاس میں پہلے سے کچھ بہتر تعداد میں آرہے ہیں لیکن اب بھی ان کو حاضری بڑھانے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ بین الاقوامی سازش کے تحت شہید محترمہ بینظیر بھٹو کو شہید کیا گیا، وہ پاکستان کی تاریخ کا سیاہ ترین دن تھا، ملک اس حادثے کے بعد سے اب تک سنبھل نہیں سکا ہے، اگر محترمہ زندہ ہوتیں تو اندرونی اور بیرونی حالات یکسر مختلف ہوتے۔

اسی لیے ہم سب پر یہ لازم ہے کہ پاکستان کو مسائل اور دہشت گردی سے نکالنے کے لیے محترمہ بے نظیر بھٹو کے اصولوں پر عمل پیرا ہوں۔

ایک سوال کے جواب میں میاں رضا ربانی نے بتایا کہ پاناما پیپرز کے حوالے سے اپوزیشن کا بل پاس ہوکر قومی اسمبلی میں جا چکا ہے جب کہ حکومت کا داخل کیے جانے والا بل اسٹیڈنگ کمیٹی کے حوالے کردیا گیا ہے جو اس پر رپورٹ پیش کرے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top