The news is by your side.

Advertisement

شطرنج کی چالیں چلنے والے خود چال میں پھنس گئے

کراچی: بین الاقوامی شطرنج کی خاتون کھلاڑی جارجیا جانے کے لیے کراچی ایئرپورٹ پہنچے تو انہیں نام ای سی ایل میں شامل ہونے کی وجہ سے واپس بھیج دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق بین الاقوامی شطرنج کی خاتون کھلاڑیوں کو 22 ستمبر کو جارجیا کے لیے اُڑان بھرنا تھی لیکن جب شطرنج کی کھلاڑی ایئرپورٹ پہنچیں تو ان کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ میں شامل ہونے کی وجہ سے واپس بھیج دیا گیا۔

خاتون شطرنج کھلاڑی نے کہا تھا کہ ہم 22 ستمبر کو ایئرپورٹ پہنچے صبح 6 بجے ہماری فلائٹ تھی تو ہمیں بتایا گیا کہ 13 لوگوں کے نام ای سی ایل میں ڈال دئیے گئے ہیں، 13 کھلاڑیوں پر مشتمل ٹیم تھی ہماری آج ہم پانچ دن بعد بہت پریشان ہوکر گھر جارہے ہیں اور شاید زندگی میں کبھی شطرنج نہیں کھیلیں گے۔

ایک اور خاتون کھلاڑی کا کہنا تھا کہ ہم پچھلے پانچ دن سے دربدر پھر رہے ہیں، ہماری کوئی سن نہیں رہا ہے اور ہم پاکستان کے نامور شطرنج کے کھلاڑی ہیں، ویمن ٹیم میں صنوبیہ واصف ہیں، جن کے پاس دو ٹائم انٹرنیشنل ڈبلیو سی ایم کا ٹائٹل ہے۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز نذیر شاہ کے مطابق شطرنج کے کھلاڑیوں کا کہنا تھا کہ آئندہ ہم شطرنج نہیں کھیلیں گے، دلبرداشتہ کھلاڑیوں کا کہنا ہے ہمیں انصاف فراہم کیا جائے۔

واضح رہے کہ جارجیا میں 43ویں شطرنج چیمپئن شپ منعقد ہورہی ہے جو 23 ستمبر سے 6 اکتوبر تک جاری رہے گی، چیمپئن شپ میں دنیا بھر کے شطرنج کے نامور کھلاڑی حصہ لے رہے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں