The news is by your side.

Advertisement

لیگی ایم این اے کیخلاف درخواست پرچیف جسٹس نے کارروائی کا حکم دے دیا

اسلام آباد : چیف جسٹس آف پاکستان نے مسلم لیگ نون کے رکن قومی اسمبلی افضل کھوکھر کی جانب سے شہری کو تشدد کا نشانہ بنانے کا نوٹس لے لیا، ان کا کہنا ہے کہ کسی کی بدمعاشی نہیں چلے گی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے مقامی شہری امتیاز ہاشمی کے بیٹے کو تشدد کا نشانہ بنانے سے متعلق درخواست پر سماعت کی۔

درخواست گزار نے مؤقف اختیار کیا کہ لیگی ایم این اے افضل کھوکھر نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر میرے بیٹے کو برہنہ کرکے وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا اور برہنہ وڈیو یوٹیوب پر ڈال دی۔

چیف جسٹس پاکستان نے اظہار برہمی کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ کسی کی بدمعاشی نہیں چلنے دیں گے، انہوں نے ڈی آئی جی کو حکم دیا کہ وہ رکن قومی اسمبلی کو جا کر اپنی زبان سے ان کی جانب سے سمجھا دیں۔

مزید پڑھیں: عدالت کو مذاق نہ بنایا جائے، ڈسپلن پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا، چیف جسٹس

چیف جسٹس پاکستان نے قرار دیا کہ اگر ایم این اے افضل کھوکھر قصور وار ہوئے تو قانون کے تحت کارروائی ہوگی، چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے حکم دیا کہ متاثرہ شہری کو مکمل سیکیورٹی دی جائے اور امتیاز ہاشمی کو کچھ ہوا تو اس کی ذمہ داری پولیس پر عائد ہوگی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں