ریسٹورنٹ کے مبینہ زہریلے کھانے سے دو بچوں کی ہلاکت، چیف جسٹس نے نوٹس لے لیا -
The news is by your side.

Advertisement

ریسٹورنٹ کے مبینہ زہریلے کھانے سے دو بچوں کی ہلاکت، چیف جسٹس نے نوٹس لے لیا

اسلام آباد : چیف جسٹس آف پاکستان نے کراچی کے ہوٹل میں مضر صحت کھانا کھانے سے دو بچوں کی اموات کا نوٹس لے لیا، مکمل رپورٹ دس روز میں طلب کرلی۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس آف پاکستان ثاقب نثار نے کراچی کے ایک مقامی ہوٹل میں کھانا کھانے سے دو کمسن بچوں کی ہلاکت کے واقعے کا نوٹس لے لیا۔

چیف جسٹس نے حکم جاری کیا ہے کہ بچوں کی ہلاکت پر دس دن میں مکمل رپورٹ پیش کی جائے، انہوں نے اس حوالے سے سندھ فوڈ اتھارٹی اور وزارت نیشنل فوڈ سیکیورٹی اینڈ ریسرچ سے بھی جواب طلب کرلیا ہے۔

چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کا مزید کہنا تھا کہ سندھ فوڈ اتھارٹی کی کارکردگی بری طرح ناکام ہوچکی ہے۔

واضح رہے کہ کچھ روز قبل کراچی میں واقع ایریزونا گرل ریسٹورنٹ کا کھانا کھانے کے بعد دو بچوں اور ان کی والدہ کی حالت رشویشناک ہوگئی تھی، لیکن اسپتال جا کر دو بچے ڈیڑھ سالہ احمد اور 5 سالہ محمد دوران علاج جاں بحق ہوگئے تھے۔

مزید پڑھیں : مبینہ طور پر مضرِ صحت کھانا کھانے سے جاں بحق ہونے والے بچے سپردِ خاک

بعد ازاں بچوں کی نمازِ جنازہ میں ان کے والد احسن اسلم کے ضبط کا بندھن بھی ٹوٹ گیا، پھوٹ پھوٹ کر رو پڑے، اسپتال میں زیرِ علاج والدہ کو بچوں کا آخری دیدار کرایا گیا، متاثرہ خاندان کا دکھ بانٹنے کے لیے سندھ حکومت کا کوئی وزیر یا مشیر جنازے میں شریک نہیں ہوا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں