اختیارات کی جنگ: آئی جی سندھ نے چیف سیکریٹری کوخط لکھ دیا -
The news is by your side.

Advertisement

اختیارات کی جنگ: آئی جی سندھ نے چیف سیکریٹری کوخط لکھ دیا

کراچی : وزیرداخلہ سندھ سہیل انور سیال اورآئی جی سندھ کے درمیان اختیارات کی سرد جنگ گرم ہوگئی۔ اےڈی خواجہ نے اختیارات سے متعلق چیف سیکریٹری کو خط لکھ دیا۔

تفصیلات کے مطابق آئی جی سندھ اور حکومت میں اختیارا ت کی جنگ شدت اختیار کرگئی ہے اور سندھ حکومت کے اقدام کے جواب میں آئی جی سندھ نے اپنے اختیارات کو محدود کرنے کے حوالے سے چیف سیکریٹری سندھ کو خط لکھ کر اپنے تحفظات سے آگاہ کیا ہے۔

خط میں لکھا ہے کہ چھیٹاں اور آؤٹ آف اسٹیشن سے متعلق اختیار صوبے کےانسپکٹر جنرل کا ہے! حکومت سندھ مداخلت نہ کرے۔

آئی جی کی جانب سے چیف سیکریٹری سندھ  کو لکھے گئے خط میں اے ڈی خواجہ نے وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کی جانب سے اختیارات کی منتقلی پر تحفظات کا اظہارکرتے ہوئے اقدام کوغلط قرار دیا۔ پچیس مئی کو وزیرداخلہ نے چھٹیوں اور آؤٹ آف اسٹیشن معاملے پرآئی جی سندھ کےایکشن کو بچکانہ قرار دیا تھا۔

اختلافات کی اصل وجہ کیا تھی؟

 یاد رہے کہ حکومت سندھ نےاکتیس مئی کو آئی جی سندھ کےاختیارات محدود کرتے ہوئےڈی آئی جیز اورایس ایس پیز کو اسٹیشن چھوڑنے سے پہلے چیف سیکریٹری سندھ کو آگاہ کرنے کا پابند کردیا تھا۔

اے ڈی خواجہ اورحکومت سندھ میں اختلافات اس وقت کھل کر سامنے آئے جب آئی جی سندھ نے نئے صوبائی وزیر داخلہ سہیل انور سیال کے اجلاس میں شرکت نہ کی۔


مزید پڑھیں : صوبائی حکومت نے آئی جی سندھ پر نئی پابندی عائد کردی


اس کے علاوہ آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے اپنے ماتحت افسران کو بھی اجلاس میں شرکت کیلیے اجازت لینے کی شرط رکھی تھی۔

اس اقدام کے بعد حکومت سندھ نے پولیس افسران کی چھٹیوں کی منظوری کو چیف سیکریٹری کی منظوری سے مشروط کردیا تھا اور اب نئے حکم نامے کے تحت آئی جی سندھ صوبائی ہیڈ کوارٹر سے باہر جانے کیلئے اجازت کے پابند ہونگے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں