ملک میں مردم شماری2مرحلوں میں کی جائےگی‘آصف باجوہ -
The news is by your side.

Advertisement

ملک میں مردم شماری2مرحلوں میں کی جائےگی‘آصف باجوہ

اسلام آباد: چیف شماریات آصف باجوہ کاکہناہے کہ ملک میں مردم شماری دومرحلوں میں کی جائے گی،مردم شماری کے لیے45000 سیکورٹی اہلکاروں کی خدمات لیں گے۔

تفصیلات کےمطابق اسلام آباد میں چیف شماریات آصف باجوہ نےمیڈیا کو بریفنگ میں بتایا کہ آرمی، رینجرز، ایف سی اور پولیس مردم شماری کے لیے تعاون کرے گی۔

انہوں نے کہا کہ سیکیورٹی پر تقریباََ 7 ارب روپے خرچ آئےگا۔مردم شماری کے لیےحساس علاقوں کی نشاندہی کے لیے صوبائی حکومتوں کو کہہ دیا ہے۔

آصف باجوہ کا کہناتھا کہ صوبائی حکومتوں کی جانب سے حساس علاقوں کی نشاندہی پرفوج سے تعاون کی درخواست کی جائے گی،جبکہ مردم شماری کا پہلا مرحلہ چاروں صوبوں سے بیک وقت شروع ہو گا۔

انہوں نے بتایا کہ خیبر پختونخواہ میں مردان اور پشاور سے مردم شماری شروع ہو گی،جبکہ پنجاب میں لاہور فیصل آباد ، ڈیرہ غازی خان اورسرگودھا سے شروع ہو گی۔

چیف ادارہ شماریات کا کہناتھاکہ دارلحکومت اسلام آباد مکمل طور پر پہلے مرحلے میں شامل ہو گا۔

بلوچستان میں کوئٹہ زوب، سبی مکران سے مردم شماری کا آغاز کریں گے،جبکہ سندھ میں کراچی اورحیدر آباد سے آغاز ہوگا۔

آصف باجوہ نے بتایا کہ آزاد کشمیر، فاٹا اور بچ جانے والے علاقوں میں مردم شماری دوسرے مرحلے میں ہو گی۔انہوں نے بتایا کہ مردم شماری کے لیےٹریننگ کا آغاز شروع کرنے والے ہیں۔

مزید پڑھیں:سپریم کورٹ کا15مارچ سےمردم شماری کاآغازکرنےکاحکم

واضح رہے کہ گزشتہ سال دسمبر میں سپریم کورٹ آف پاکستان نےحکومت کو 15مارچ 2017 تک مردم شماری کرانےکا حکم دے دیاتھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں