The news is by your side.

Advertisement

ٹریفک پولیس اہلکارکی ہٹ دھرمی نے نومولود بچے کی جان لے لی

سرگودہا: ٹریفک پولیس اہلکارکی ہٹ دھرمی نے نومولود کی جان لے لی،شہری مشتعل،خوشاب روڈ میدان جنگ بن گیا۔

تفصیلات کے مطابق سلطان ٹاؤن کا رہائشی طارق اپنی اہلیہ کے ہمراہ اپنے چاردن کے نومولود بچے کو لے کرڈسٹرکٹ ٹیچنگ اسپتال ایمرجنسی میں جارہا تھا کہ اسپتال کے باہرٹریفک پولیس اہلکارنے اسے روک لیااور کاغذات دکھانے پر اصرارکیا جس پر اس نے منت سماجت کی کہ اس کے بچے کی حالت بہت تشویش ناک ہے انہیں جانے دولیکن منت سماجت کے باوجودٹریفک پولیس اہلکارنے موٹرسائیکل سوار شہری کوبیماربچے سمیت روکے رکھاٹریفک اہلکارنے ایک نہ سنی اور بحث کرتارہااس دوران نومولود بچہ دم توڑگیا۔

جس پر بچے کے ماں باپ اور اہل خانہ نے احتجاج شروع کردیاجسے دیکھ کر شہریوں کی بڑی تعدادموقع پر جمع ہوگئی اورٹریفک پولیس اہلکارکی سرعام پٹائی شروع کردی۔

مارپیٹ کے دوران ٹریفک اہلکار کی وردی پھاٹ گئی اور اسے پیٹتے ہوئے ادھرسے ادھربھگاتے رہے، خوشاب روڈپریہ تماشاکافی دیرلگارہااور قانون نافذکرنے والے اداروں کے اہلکاروں نے اپنے اہلکارکو بچانے اور صورتحال کو سمجھنے کی کوشش نہ کی ۔

بعدازاں شہریوں نے احتجاج کرتے ہوئے خوشاب روڈ بلاک کردیا، اے آروائی نیوزپر خبرنشر ہونے کے بعد بلآخر آرپی او ذوالفقارحمید نے واقعہ کے مبینہ ذمہ داراے ایس آئی ٹریفک سارجنٹ عابد حسین کو معطل کرکے ایس پی ٹریفک کو انکوائری آفیسرمقررکردیاہے اور انکوائری رپورٹ آنے کے بعد اس سلسلہ میں مزیدکاروائی کی جائے گی۔


Child killed as cruel police did not let father… by arynews

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں