The news is by your side.

Advertisement

اولاد کو کتوں کا گوشت کھلانے والی ماں گرفتار، دو بچے بازیاب

خارکیو: یوکرین کی پولیس نے ایک ایسی خاتون کو گرفتار کیا ہے جس پر الزام ہے کہ وہ اپنے بچوں کو زبردستی کتوں کا گوشت کھلاتی تھی، کارروائی کے دوران دو بچوں کو بھی بازیاب کروایا گیا۔

شمال مشرقی یوکرین کے شہر خارکیو میں پولیس نے ایک فلیٹ سے دو ایسے دو بچوں کو تحویل میں لیا ہے جن کی ماں ان کا پیٹ بھرنے کیلئے شہر کے آوارہ کتوں کو کاٹ کر ان کا گوشت کھلاتی تھی۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق چار سالہ بچہ اور اس کا دوسالہ بھائی ایک انتہائی غلاظت سے بھرے اور بدبودار فلیٹ میں بند کیے گئے تھے اور ان کی 30سالہ ماں للیہ گرینینکو اور نانی انہیں باہر بھی جانے نہیں دیتی تھیں۔

مبینہ طور پر ان خواتین نے اپنے گھر کو کچرے کے ڈبوں سے بھر رکھا تھا جو وہ کئی سال سے جمع کررہی تھیں اسی گندگی کے باعث گھر میں چوہوں اور لال بیگوں کی بھرمار تھی اور بلوں کی عدم ادائیگی کے باعث محکمہ کی جانب سے پانی کی لائن کافی عرصہ پہلے منقطع کردی گئی تھی۔

پولیس کے مطابق گھر میں کوئی بیت الخلا بھی نہیں تھا جس کیلئے ماں نانی اور بچے گھر کے فرش پر رفع حاجت کیا کرتے تھے۔

پولیس کو اس بات کی اطلاع ان کے پڑوسی نے دی اور بتایا کہ ساتھ والے فلیٹ سے شدید تعفن اٹھتا ہے اور لال بیگ اور چوہے بھی آتے ہیں اس لیے کارروائی کی جائے۔

جس پر پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے فلیٹ پر چھاپہ مارا اور دونوں بچوں کو بازیاب کرالیا اور ماں کو گرفتار کر کے تھانے لےجایا گیا۔

اس حوالے سے پولیس حکام کا کہنا ہے کہ لاپرواہی کا الزام ثابت ہونے پر بچوں کی ماں کو پانچ سال قید کی سزا کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں