The news is by your side.

Advertisement

کروناوائرس: چین اور امریکا ایک بار پھر آمنے سامنے

واشنگٹن: کروناوائرس سے متعلق الزامات پر امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو نے چینی اعلیٰ عہدیدار سے ٹیلی فونک رابطہ کرکے شدید برہمی کا اظہار کیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق چینی اعلیٰ عہدیدار ینگ جیچی اور امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو کے درمیان ہونے والی گفتگو شدید گرما گرمی رہی۔

اس موقع پر مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ چین کروناوائرس سے متعلق جھوٹی خبریں پھیلارہا ہے، چینی وزرات خارجہ کو چاہیئے کہ وہ امریکا پر الزام تراشی سے گریز کرے۔

ٹرمپ نے کرونا وائرس کو ‘چینی وائرس’ کا نام دے دیا

انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات ایک دوسرے پر الزام تراشی کے بجائے کروناوائرس سے لڑنے کا ہے۔ تمام ممالک کو چاہیے کہ وہ مل کر مہلک وائرس کا مقابلہ کریں۔

خیال رہے کہ امریکا اور چین کے درمیان کروناوائرس سے متعلق لفظی گولہ باری جاری ہے۔

چین نے الزام عائد کیا تھا کہ ووہان شہر میں کرونا وائرس امریکی فوجیوں کی وجہ سے پھیلا ہے۔ بعد ازاں وائٹ ہاؤس انتظامیہ نے اس دعوے کو بے بنیاد قرار دیا۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے چین کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ہلاکت خیز کرونا وائرس کو ‘چینی وائرس کا نام دے دیا ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں