بیجنگ : چین نے بین الاقوامی ثالثی عدالت کا فیصلہ مسترد کردیا -
The news is by your side.

Advertisement

بیجنگ : چین نے بین الاقوامی ثالثی عدالت کا فیصلہ مسترد کردیا

بیجنگ: بین الاقوامی ثالثی عدالت نے جنوبی بحیرہ چین پر فلپائن کے حق کو تسلیم کرتے ہوئے چین کے خلاف فیصلہ سنایا دیا،جبکہ چین نےعالمی عدالت کے فیصلےتسلیم کرنے سے انکارکردیا.

تفصیلات کے مطابق نیدرلینڈز کے شہر دی ہیگ میں قائم ‘بین الاقوامی ثالثی عدالت’ میں فلپائن بحیرۂ جنوبی چین پر چین کے دعوے کے خلاف مقدمہ لے کر گیا تھا،عدالت نے اپنے فیصلےمیں کہا کہ اس بات کے کوئی شواہد نہیں ملے کہ چین نے تاریخی اعتبار سے خصوصی طور پر سمندر اور وسائل پرکنٹرول رکھا.

چین نے فیصلے کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے اسے تسلیم کرنے سے انکار کردیا جبکہ فلپائن نے عدالت کے فیصلے کو خوش آئند قرار دیا ہے.

چین کے صدر ژی جن پنگ نے کہا کہ کوئی عدالتی فیصلہ چین کی جغرافیائی حاکمیت پراثر انداز نہیں ہو سکتا تاہم چین اپنے ہمسائیوں کے ساتھ تمام تنازعوں کو حل کرنے کا تہیہ کیے ہوئے ہے.

فلپائن نے عالمی عدالت کےفیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ فیصلہ ایک سنگ میل کی حیثیت رکھتا ہے،فلپائن نے چین کے ساتھ علاقائی تنازعات کے پرامن حل کے عزم کا بھی اعادہ کیا.

بین الاقوامی قانون کے ماہرین کا کہنا تھا کہ بین الاقوامی ثالثی عدالت کے پاس اس فیصلے کو نافذ کرنے کی طاقت نہیں ہے،ان کا مزید کہنا تھا کہ اس فیصلے سے فلپائن کو فائدہ ہوگا تاہم اسے تسلیم نہ کرنے سے چین کی ساکھ خراب ہوگی.

یاد رہے کہ چین کی بحریہ نے حال ہی میں جنوبی بحیرہ چین میں فوجی مشقیں کی تھی.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں