The news is by your side.

Advertisement

چین میں ڈرائیور کے بغیر مونو ریل کا کامیاب تجربہ

بیجنگ : چین نے جدید ٹیکنالوجی کو بروئے کار لاتے ہوئے اپنی پہلی ایلیویٹڈ مونو ریل متعارف کرا دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ٹیکنالوجی کی دنیا میں چین نے ایک اور سنگ میل عبور کرلیا، جدید  ٹرینوں کی ایجاد کے بعد چین نے اپنی پہلی ایلیویٹڈ ٹرین کا کامیاب تجربہ کرلیا ہے،سنگل لائن یہ ٹرین خود کار انداز میں چلنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔

چین میں یہ پہلی ایسی ٹرین ہے کو اپنے تمام سفر کے دوران زمین سے اوپر چلے گی۔

ٹیکنالوجی سے آراستہ یونگوئی‘ نامی 4 میٹر کی اس بغیرڈرائیور کے مونو ٹرین کی رفتار اسی کلومیٹر فی گھنٹہ تک ہے اور عوام بہت جلد اس میں سفر کرسکیں گے۔

ویڈیو دیکھیں

یاد رہے گذشتہ  سال چین نے فضاء میں لٹکی اور پٹریوں پر چلنے والی اسکائی ٹرین کا کامیاب تجربہ کیا تھا، اسکائی ٹرین 70 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے دوڑنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔


مزید پڑھیں : چین میں اسکائی ٹرین کا کامیاب تجربہ


ٹرین میں 510 افراد کے بیٹھنے کی گنجائش موجود ہے، تجربے کو کامیاب بنانے کے لیے ابھی سفر کے لیے ٹکٹ کی رقم مختص نہیں کی گئی بلکہ عوام اس میں بالکل مفت سفر کررہے ہیں۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں