The news is by your side.

Advertisement

چین نے یمن کے 100 کروڑ کے قرضے معاف کردیئے

بیجنگ : چین نے خطے میں تجارتی سرگرمیوں کے دوام کے لیے یمن کے 100 کروڑ ڈالر کے قرضے معاف کرنے کا اعلان کردیا ہے.

تفصیلات کے مطابق چین کی جانب سے اس فیصلے کا اعلان چینی سفیر اور یمنی ڈپٹی وزیراعظم کے درمیان ہونے والی ملاقات کیا گیا جسے معاہدے کو حتمی شکل دینے کے بعد دونوں حکومتوں کی جانب سے دستخط کیئے جائیں گے.

غیر ملکی خبر رساں دونوں رہنماؤں کے درمیان ہونے والی ملاقات میں دوطرفہ باہمی دلچسپی کے امور بھی زیر بحث لائے گئے اس موقع پر یمن کے ڈپٹی وزیراعظم اور وزیر خارجہ عبدالملک الکیلففی نے یمن پر چین کے قرضے سے متعلق امور اور حکومت کی مالی و معاشی حالات پر تبادلہ خیال کیا.

یمن میں چین کے سفیر ٹیان فائی نے کہا کہ ساتھ چین اور یمن کے درمیان مضبوط باہمی تعلقات ہیں اور چین اپنے دوست ملک کو مشکل کے وقت تنہا نہیں چھوڑ سکتا اس لیے چینی حکومت نے یمن کے 100 کروڑ کے قرضے معاف کرنے کا اعلان کردیا ہے جس کے لیے اگلے ہفتے ایک معاہدہ ضبط تحریر کیا جائے گا.

چین حکومت کے اس قدام کی تعریف کرتے ہوئے کہا ہے کہ یمن اورچین کے مابین دیرینہ اور دوستانہ تعلقات ہیں جو ہر گذرتے روز کے ساتھ مضبوط سے مضبوط تر ہوتے جارہے ہیں یہی وجہ ہے کہ چین اس مشکل گھڑی میں بھی ہمارے ساتھ کھڑا ہے.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں