The news is by your side.

Advertisement

چین نے اپنا پہلا بڑا بحری بیڑا سمندر میں اتار دیا

بیجنگ: چین نے اپنا پہلا بڑا بحری بیڑا سمندر میں اتار دیا، یہ طیارہ بردار بحری بیڑا مکمل طور پر ملک ہی میں تیار کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق بحری بیڑے کو ایک ایسے وقت میں تجرباتی طور پر سمندر میں اتارا گیا ہے جب چین کی جانب سے عالمی سطح پر پانیوں میں اپنی موجودگی میں مسلسل اضافہ کیا جارہا ہے۔

چینی حکام کے مطابق اس بحری بیڑے کی تیاری چینی بحریہ کو جدید تر بنانے کے منصوبے کا ایک حصہ ہے، خیال رہے کہ جنوبی چین میں جزائر کی ملکیت کے حوالے سے تنازعات کے بعد چین نے اپنی بحری موجودگی میں اضافہ شروع کر رکھا ہے۔

ملکی ساختہ اس عسکری بحری بیڑے کو چین کے شمال مشرق میں واقع ڈالیان کی بندرگاہ سے کھلے پانیوں میں اتارا گیا، اس دوران طیارہ بردار بحری بیڑے کے انجن اور نیوی گیشن سسٹم کی جانچ کی جائے گی۔

جاری کردہ تفصیلات کے مطابق طیارہ بردار بحری بیڑے کوعارضی نام Type 001A دیا گیا ہے، اس کی تیاری کا آغاز 2013 میں کیا گیا اور 2020 تک اس کی تکمیل کا امکان ہے جس کے بعد اسے چین کی بحریہ میں شامل کردیا جائے گا۔

چینی انجینیئرز پر حملوں کا مقصد انہیں کام چھوڑ کر جانے پر مجبور کرنا تھا: ملزم کا انکشاف


بتایا گیا ہے کہ اس بحری بیڑے میں تیل سے چلنے والا روایتی اسٹیم انجن نصب ہے اور یہ چالیس طیارے لے جانے کی گنجائش رکھتا ہے۔

واضح رہے کہ ایک ماہ قبل چینی صدر شی جن پنگ نے اپنی تقریر میں کہا تھا کہ وہ چینی کمیونسٹ پارٹی کے پرچم تلے ایک عالمی معیار کی نیوی تعمیر کرنا چاہتے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں