The news is by your side.

Advertisement

سرحدی صورتحال، چین نے ایک بار پھر بھارت کو خبردار کردیا

بیجنگ : چینی وزارت خارجہ کے ترجمان نے خبردار کیا ہے کہ بھارت صورتحال کا غلط اندازہ نہ لگائے اورنہ ہی چین کی خودمختاری کی حفاظت کے حوالے سے کسی غلط فہمی میں رہے۔

تفصیلات کے مطابق چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان لی جیان ژاؤ نے میڈیا بریفنگ میں کہا کہ چین،بھارت سرحد پرصورتحال کنٹرول میں ہے، اورچینی فورسز پرحملہ کیا۔

ترجمان لی جیان ژاؤ کا کہنا تھا کہ بھارت کےفرنٹ لائن فوجیوں نے سرحدی خلاف ورزی کی ، بھارت صورتحال کا غلط اندازہ نہ لگائے اورنہ ہی چین کی خود مختاری کی حفاظت کے حوالے سے کسی غلط فہمی میں رہے۔

گذشتہ روز چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان لاؤ جیاں ژاؤ نے میڈیا بریفنگ میں کہا تھا کہ لائن آف ایکچوئل کٹرول پر جو واقعہ ہوا بالکل واضح ہے، جو کچھ ہوا، چین کے علاقے میں ہوا، اس کی ذمہ داری چین پرعائد نہیں ہوتی۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ وادی گلوان ہمیشہ سے چین کا حصہ ہے، بھارت سے سفارتی اور فوجی سطح پر رابطے میں ہیں۔

یاد رہے لداخ کےعلاقے گلوان میں بھارتی سورماؤں نے چینی علاقے میں گھسنے کی کوشش کی، جس کے نتیجے میں کرنل سمیت بیس بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے جبکہ تعدد بھارتی فوجی زخمی ہوئے جن میں چاربھارتی فوجیوں کی حالت تشویشناک ہے۔

چین کا کہنا تھا لداخ میں سرحدی صورتحال کا ذمہ داربھارت ہے، بھارتی فوجیوں نے حملہ کیا اورچینی علاقے میں گھسنے کی کوشش کی، بھارت اپنے فوجیوں کوبازرکھے اورایسا اقدام نہ کرے جس سے کشیدگی بڑھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں