The news is by your side.

Advertisement

چینی محققین کی کرونا وائرس کے ماخذ سے متعلق رپورٹ

بیجنگ: چینی محققین کا کہنا ہے کہ نیا اور مہلک ترین کرونا وائرس قدرتی طور پر پیدا ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق چین کے سائنسی تحقیقی رسالے سائنس چائنا لائف میں حالیہ دنوں شائع ہونے والی ایک تحقیقی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ چینی محققین کی اکثریت اس نتیجے پر پہنچی ہے کہ کرونا وائرس قدرتی طور پر پیدا ہوا ہے۔

محققین نے بتایا کہ اس بات کے کوئی شواہد موجود نہیں ہیں کہ یہ وائرس مصنوعی طور پر لیبارٹری میں تیار کیا گیا ہے، محققین کے مطابق وائرس کی ساخت کے مطالعے سے بھی یہ بات واضح طور پر سامنے آئی ہے کہ اسے انسانوں کی جانب سے نہیں بنایا گیا۔

محققین نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ 2003 کے سارس وائرس کے مقابلے میں موجودہ کووِڈ 19 وائرس جانوروں سے انسانوں میں منتقل ہونے کی زیادہ صلاحیت رکھتا ہے، اور اس بات کے امکانات بہت کم ہیں کہ اس وائرس کو کسی لیبارٹری یا مارکیٹ سے انسانوں میں سوچے سمجھے منصوبے کے تحت پھیلایا گیا ہو۔

Comments

یہ بھی پڑھیں