The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ میں صدی کے سب سے بڑے طوفان نے تباہی مچا دی

لندن: دہائی کے سب سے بڑے طوفان کیارہ نے برطانیہ میں بڑے پیمانے پر تباہی مچا دی ہے، شمالی برطانیہ میں 92 میل فی گھنٹہ کی رفتار سے ہوائیں چلتی رہیں، یارکشائر کے مضافاتی علاقے زیر آب آ گئے، پانی لوگوں کے گھروں اور دکانوں میں داخل ہو گیا۔

تفصیلات کے مطابق برطانیہ میں کیارہ طوفان کے باعث کئی علاقے متاثر ہو گئے ہیں، محکمہ موسمیات نے مزید انتباہ جاری کر دی ہے، یارکشائر کے مضافاتی علاقے زیر آب آ گئے ہیں، پانی گھروں اور دکانوں میں داخل ہونے سے نظام زندگی مفلوج ہو گیا۔

محکمہ موسمیات کی جانب سے 46 مزید وارننگز جاری کر دی گئیں، طوفان تھمنے کے بعد 6 انچ تک برف پڑنے کی پیش گوئی بھی کی گئی ہے، طوفان سے پروازیں، ٹرین اور پبلک ٹرانسپورٹ بری طرح متاثر ہیں، برطانوی میڈیا نے کیارہ کو صدی کا سب سے بڑا طوفان قراردے دیا، ہیتھرو ایئر پورٹ پر فلائٹ شیڈول بری طرح متاثر ہو گیا، برٹش ایئر ویز کے جہاز کو لینڈنگ کے فوراً بعد اڑان بھرنا پڑ گئی۔

طوفان کے باعث مانچسٹر پک ڈلی اسٹیشن سے ٹرین سروس معطل کر دی گی ہے، ٹرین ٹریک زیر آب آنے اور درخت گرنے سے ٹرینوں کی آمد و رفت معطل ہے، لندن کے ہیوسٹن اسٹیشن میں رش بڑھنے سے اسٹیشن کے دروازے بند کر دیے گئے، ٹرین کمپنیز کی جانب سے مسافروں کو سفر نہ کرنے کی ہدایات بھی جاری کی گئی ہے۔

بارش کے باعث دریاؤں میں طغیانی سے قریبی آبادیاں شدید متاثر ہوئیں جب کہ امدادی کارروائیوں کے لیے پولیس اور ایمرجنسی سروسز ان علاقوں میں موجود ہیں، محکمہ موسمیات کے جانب سے شہریوں کو محتاط رہنے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں، مانچسٹر میں ٹرین سروس بُری طرح متاثر ہوئی ہے جس سے ہزاروں افراد متاثر ہوئے ہیں طوفانی ہواؤں کے باعث درخت جڑوں سے اکھڑ گئے جس سے کئی علاقوں کا آپس میں زمینی رابطہ منقطع ہو گیا ہے۔

طوفان کے باعث یارکشائر کے تقریباً تین ہزار سے زائد گھروں کی بجلی کٹ گئی تھی جسے بحال کیا گیا مگر اب بھی لیڈز میں ایک ہزار سے زائد گھر بجلی کی فراہمی سے محروم ہیں۔ بریڈفورڈ اور مانچسٹر کو ملانے والی مرکزی شاہراہ M62 کو بھی جزوی طور پر بند کیا گیا، پانی جمع ہونے کے باعث مانچسٹر رنگ روڈ کو بھی متعدد مقامات سے بند کیا گیا جس کے باعث گاڑیوں کی لمبی قطاریں دیکھنے میں آئیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں