The news is by your side.

Advertisement

سیکیورٹی خدشات: چینی شہریوں‌ کو ویزا دینے کا طریقہ کار تبدیل کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد: حکومت نے چینی باشندوں کی سیکیورٹی کے لیے انہیں ویزا دینے کے طریقہ کار میں تبدیلی کا فیصلہ کیا ہے، مستقبل میں ویزوں کی توسیع صرف امیگریشن و پاسپورٹ آفسز کریں گے، پاکستانی سفارت خانے اور مشنز صرف ایک سال کا ملٹی پل ویزا جاری کرسکیں گے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر داخلہ چوہدری نثار کی زیر صدارت اجلاس منعقد ہوا جس میں چینی شہریوں کو پاکستان کا ویزا دینے کے طریقہ کار سے متعلق غور کیا گیا۔

اجلاس میں سیکریٹری داخلہ، چیئرمین نادرا، وزارت خارجہ سمیت دیگر حکام نے شرکت کی اور چینی شہریوں کی سیکیورٹی اور ویزا سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا۔

وزیر داخلہ نے نادرا اور ایف آئی اے کو ضروری اقدامات کرنے کے احکامات دیے، چینی شہریوں کے تحفظ کے لیے وزارت داخلہ نے کئی اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے اور بہتر سیکیورٹی کے لیے وزارت نئی پالیسی پر غور شروع کردیا ہے۔

مستقبل میں چینی شہریوں کو دعوت نامے،اسائنمنٹ پر ویزا جاری کیا جائے گا، بزنس ویزا اورانٹری ویزا تصدیق شدہ دعوت ناموں پر جاری ہوگا، دعوت نامے چینی حکومت،ایوان صنعت و تجارت سے تصدیق شدہ ہوں گے۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ بزنس ویزا میں توسیع کو بھی ریگولیٹ کیا جائے گا، ریجنل پاسپورٹ آفسز کو ویزوں میں توسیع دینے کے اختیارات ختم کردیے جائیں گے، مستقبل میں ویزوں میں توسیع صرف وزارت امیگریشن و پاسپورٹ کرے گی اور پاکستانی سفارتخانے اور مشنز صرف ایک سال کا ملٹی پل ویزا جاری کرسکیں گے۔

اجلاس ذرائع کے مطابق ویزوں کا اجرا چینی حکام کی سیکیورٹی کلیئرنس سے مشروط ہوگا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں