The news is by your side.

Advertisement

سول ملٹری بیوروکریسی کے ہاتھ بھی صاف نہیں، رضا ربانی

اسلام آباد: چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا ہے کہ سول اور ملٹری بیورو کریسی پاک و شفاف نہیں ہیں، احتساب سب کا ہونا چاہیے،یہ نہیں چلے گا کہ سیاسی قوتوں کے لیے اسپیشل کورٹس بنائے جائیں۔

پیپلزپارٹی کے رہنما رضاربانی جامعہ اردو کی ایک تقریب میں آج بہت فارم میں نظرآئے اور احتساب کرنے والوں پر خوب گرجے انہوں نے تسلیم کیا کہ پیپلزپارٹی کے ورکرزکرپشن میں ملوث ہیں لیکن ساتھ ہی یہ بھی کہہ دیا کہ ملک میں کوئی بھی مقدس گائے نہیں، سب کو احتساب کے کٹہرے میں کھڑا کیاجائے۔

رضاربانی نے کہا کرپشن کی تحقیقات کے لیے اسپیشل کورٹس بنائے جائیں لیکن پھر ہرکلاس کے لوگوں کو بھی وہاں لایاجائے، رضاربانی کا یہ بھی کہنا تھا کہ نیب سےمتعلق کرپشن کےقوانین کی وضاحت ہونی چاہیے۔

رضا ربانی کے بیان پرپی ٹی آئی رہنما عمران اسماعیل کا کہنا ہے کہ فوج کے اندراحتساب کاعمل موجود ہے۔

ن لیگی رہنما رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا کہ نیب کا احتساب نامناسب ہے، اے این پی کے رہنما زاہد خان کہتے ہیں احتساب سب کا ہونا چاہیئے، زاہد خان کا کہنا تھا کہ احتساب سب کا ہوگا تو ملک بچ پائے گا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں