The news is by your side.

Advertisement

ڈینگی وائرس سے متعلق بے بنیاد افواہیں پھیلانے والوں کے خلاف کارروائی کی ہدایت

پشاور : وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے ڈینگی وائرس سے متعلق بے بنیاد افواہیں پھیلانے والوں کے خلاف کارروائی اور ہنگامی بنیادوں پر اینٹومالوجسٹ بھرتی کرنے کی ہدایت کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق خیبر پختونخوا کے وزیراعلیٰ محمود خان کی زیرصدارت ڈینگی روک تھام سے متعلق خصوصی اجلاس ہوا ،اجلاس میں ڈینگی کے ادراک کے حوالے سے وزیراعلیٰ کو تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

جس میں بتایا گیا کہ صوبے بھر میں 1889 کیسز رپورٹ ہوئے جن میں 891 افراد میں وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے، ڈینگی سے اب تک کسی قسم کی اموات واقع نہیں ہوئی۔

بریفنگ وزیراعلیٰ کو بتایا کہ پرائیویٹ لیبارٹریز ذاتی مفاد اور منافع کے لئے عوام میں خوف وہراس پھیلا رہی ہیں، خون میں این ایس-1 کی تصدیق ڈینگی وائرس کی موجودگی ظاہرنہیں کرتی۔

وزیراعلیٰ نے ڈینگی سے متعلق بے بنیاد افواہیں پھیلانے والوں کے خلاف کارروائی سمیت ہنگامی بنیادوں پراینٹومالوجسٹ کی بھرتی یقینی بنانے کی ہدایت جبکہ صوبے کے تمام متعلقہ محکموں کو بھی ڈینگی کے ادراک کےلئے فعال کردار ادا کرنے کی ہدایت کی۔

یاد رہے خیبر پختون خوا سے بھی ڈینگی کیسز رپورٹ ہو رہے ہیں، سوات میں مزید 13 افراد میں ڈینگی وائرس کا شکار ہو گئے ہیں، لیڈی ریڈنگ اسپتال میں ڈینگی سے متاثرہ افراد کی تعداد 10 ہو گئی۔

کوہاٹ میں بھی انسداد ڈینگی کے لیے محکمہ صحت کی کوششیں کار آمد ثابت نہ ہو سکیں، ضلع میں ڈینگی سے متاثرہ مریضوں کی تعداد 32 تک پہنچ گئی ہے۔

خیال رہے  ملک بھر میں ڈینگی وائرس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ہے، وفاقی دار الحکومت میں وبائی صورت حال کے باعث ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ اسلام آباد نے ضلع بھر میں دفعہ 144 نافذ کر دی گئی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں