The news is by your side.

Advertisement

شوگر ملز مالکان کسانوں کے بقایا جات ادا کریں ورنہ جانے کو تیار ہوجائیں، شہباز شریف

لاہور: وزیر اعلی شہباز شریف نے تسلیم کیا ہے کہ پاکستان کا کسان دو سال میں بری طرح پٹ گیا ہے ، پنجاب میں ریسرچ کے ادارے تباہ ہو گئے ہیں ، شوگر ملز مالکان نے پندرہ دن کے اندر اندر کسانوں کے بقایا جات ادا نہ کیے تو جیل جانے کو تیار رہیں ۔

لاہور میںکسان اتحاد کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے شہباز شریف نے کہا کہ وہ بھی بھارت سے درآمدات کے خلاف ہیں لیکن پاکستانی کسان محنت کر کے زیادہ سے زیادہ اجناس پیدا کریں تو کوئی سر پھرا ہی بھارت سے اجناس درآمد کریگا ۔

شہباز شریف نے کہا وہ تسلیم کرتے ہیں کہ دو سال میں کسان بری طرح پٹ گیا ہے جس کی وجہ سے ملکی ترقی بھی متاثر ہوئی ہے لیکن اب ہمیں ملکر ملک کو اس خسارے سے نکالنا ہو گا ۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب حکومت نے بجٹ میں ریسرچ کے لیے پانچ ارب روپے رکھے ہیں صوبے میں ریسرچ کے ادارے تباہ اور ناکارہ ہو گئے ہیں جنہیں ٹھیک کرنے کی ضرورت ہے ۔

شہباز شریف نے شوگر ملز مالکان کو پندرہ دن کی مہلت دیتے ہوئے کہاکہ کسانوں کے بقایا جات ادا کریں ورنہ انہیں جیلوں میں بند کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہاکہ سندھ میں گنے کے کاشتکاروں اور انصاف کا قتل کیا گیا لیکن انہوں نے پنجاب میں گنے کی قیمت ایک سو اسی روپے من سے نیچے نہیں آنے دی ۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر قانون رانا ثنا اللہ نے کہاکہ ملتان اور پنڈی والے نے کسانوں کو اکسانے کی کوشش کی تاہم ناکام رہے انہوں نے کہاکہ پنڈی خوبصورت لوگوں کا شہر ہے لیکن وہاں ایک گھٹیاشخص بھی پیدا ہوا ہے، اس جیسا انہوں نے اپنی زندگی میں نہیں دیکھا ، تقریب کے اختتام پر دعوت کے باوجود وزیر اعلی افطار کیے بغیر ہوٹل سے روانہ ہو گئے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں