وزیر اعلیٰ کی محرم میں حساس اضلاع میں سیکیورٹی بہتر کرنے کی ہدایت -
The news is by your side.

Advertisement

وزیر اعلیٰ کی محرم میں حساس اضلاع میں سیکیورٹی بہتر کرنے کی ہدایت

کراچی: وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت امن و امان پر اجلاس ہوا جس میں محرم میں سیکیورٹی و امن و امان کی صورتحال سے متعلق تبادلہ خیال کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت امن و امان پر اجلاس ہوا۔ اجلاس میں سعید غنی، ناصر شاہ، وزیر اعلیٰ کے مشیر مرتضیٰ وہاب، چیف سیکریٹری، پرنسپل سیکریٹری، ایڈیشنل آئی جی کراچی سمیت دیگر نے شرکت کی۔

اجلاس میں محرم میں سیکیورٹی و امن و امان کی صورتحال سے متعلق تبادلہ خیال کیا گیا۔ اجلاس میں شہر میں اسٹریٹ کرائمز کی وارداتوں سے متعلق بھی گفتگو کی گئی۔

وزیر اعلیٰ سندھ نے محرم الحرام میں ضابطہ اخلاق کو مکمل طور پر نافذ کرنے کا حکم دیا۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ محرم میں سڑکوں کی صفائی، پینے کے پانی کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔

انہوں نے کہا کہ علمائے کرام نے عوام میں محبت، یکجہتی و باہمی احترام کو فروغ دیا۔

رینجرز نے امن و امان سے متعلق اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ 8007 رینجرز کے جوان صوبے میں تعینات کیے جائیں گے، سیکیورٹی پلان پولیس و دیگر اداروں کی مدد سے بنایا گیا ہے۔

ڈی آئی جی ایسٹ سلطان خواجہ نے بتایا کہ جلوسوں کی نگرانی کے لیے ڈرون کیمرا بھی استعمال ہوں گے۔ حیدر آباد ڈویژن میں تمام درگاہوں کی سیکیورٹی بھی بہتر کی گئی ہے۔

وزیر اعلیٰ نے کہا کہ جیکب آباد اور شکار پور کے حساس اضلاع میں سیکیورٹی بہتر ہونی چاہیئے۔ انہوں نے کمشنرز، ڈی آئی جیز اور ایس ایس پیز کو اپنے علاقے 12 محرم تک نہ چھوڑنے کی ہدایت کی۔

انہوں نے سعید غنی، ناصر شاہ، فیاض ڈیرو کو علما کے ساتھ اجلاس کرنے کی ہدایت دی جبکہ انسداد تجاوزات فورس کو بھی محرم کی سیکیورٹی کے لیے تعینات کرنے کی ہدایت کی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں