The news is by your side.

Advertisement

سندھ اسمبلی کا اجلاس: وزیر اعلیٰ مرادعلی شاہ کی وفاقی حکومت پرکڑی تنقید

کراچی : وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت روز ایک کراچی کمیٹی بنادیتی ہے، پیپلزپارٹی جب تک ہے سندھودیش والوں سے لڑتے رہیں گے۔

یہ بات انہوں نے سندھ اسمبلی کے اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے کہی، وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ وفاقی حکومت روز ایک کراچی کمیٹی بنا دیتی ہے، کراچی کمیٹی بنانا آئین کی خلاف ورزی ہے، میرے شہر کا ایڈمنسٹریٹر اختیار کیسے لیا جاسکتا ہے؟

سندھ کو کسی بھی قسم کا نقصان پہنچانا وفاق کو نقصان پہنچانے کے مترادف ہے، سندھ کو نقصان پہنچاؤ گے تو وفاق بھی نہیں بچے گا۔

مراد علی شاہ نے مزید کہا کہ سندھ پاکستان کی ماں ہے، اسمبلی صوبہ سندھ کے لوگوں کی پاسداری کرے گی؟ سندھ اسمبلی نے قرارداد پاکستان منظور کی تھی، پیپلزپارٹی جب تک ہے سندھو دیش والوں سے لڑتے رہیں گے۔

پیپلز پارٹی آئین پر چلتی ہے، اپوزیشن ارکان بھی اپنی قیادت کو آئین پر چلنے کیلئے کہیں، دس مہینے سے قومی اقتصادی کونسل (سی سی آئی) کا اجلاس نہیں ہوا، آئین میں لکھاہے کہ سال میں کم ازکم ایک بار سی سی آئی میٹنگ ضرور ہونی چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ اس ملک کے عوام آپ کو آپ کی مرضی نہیں چلانے دیں گے، جی ڈی پی گروتھ تین فیصد سے بھی کم ہوکر رہ گئی ہے، کالا باغ ڈیم کیلئے شہید محترمہ بے نظیر بھٹو نے بجٹ میں ایک پیسہ نہیں رکھا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں