site
stats
سندھ

سیکیورٹی فورسز کی مدد سے کراچی آپریشن میں کامیابی ملی، وزیراعلیٰ سندھ

cm sindh

کراچی : وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ کراچی میں ٹارگٹ کلنگ اور بھتہ خوری عروج پرتھی اور بھتہ، کھالیں اور فطرہ و زکوۃ سے دہشت گردوں کو فنڈنگ کی جاتی تھی جب کہ بدامنی کے باعث ٹیکسٹائل اور دیگر صنعتیں بنگلا دیش منتقل ہوئیں.

وہ نیشنل سیکیورٹی ورکشاپ کے 190 رکنی وفد سے خطاب کر رہے تھے، وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کراچی آپریشن میں سیکیورٹی فورسزکی مدد سے کامیابی ملی ہے اور آج کراچی امن کا گہوارہ بن چکا ہے جہاں بیرونی سرمایہ کار بلا خوف و خطر آتے ہیں.

انہوں نے کہا کہ سیکیورٹی اداروں نے ذبردست آپریشن کر کے دہشت گردوں کی کمر توڑ دی ہے اور کراچی شہر کی رونقیں بحال ہوئیں تاہم اس وقت سب سے بڑا چیلنج امن وامان برقرار رکھنا ہے جس کے لیے سندھ حکومت نے خصوصی اقدامات کر رکھے ہیں.

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ سندھ کو مردم شماری نتائج پرتحفظات ہیں جس کا برملہ اظہار بھی کرچکے ہیں کیوں کہ مردم شماری کے پہلے مرحلے میں ہی ہماری تجاویزنظراندازکردی گئیں اور جب خاندانوں کا شمار کیا جا رہا تھا تو ان کا ڈیٹا بھی ہم سے شیئرنہیں کیا گیا.

وزیراعلیٰ مراد علی شاہ نے کہا کہ کے-الیکٹرک نے لائن لاسز اور غیرقانونی کنکشن کم کیے ہیں جس کی وجہ سے لوڈ شیڈنگ میں بھی کمی واقع ہوئی ہے جب کہ پاور جنریشن کے لیے بھی کے-الیکٹرک نے کام کیا ہے جس کی بنیاد پر مزید بہتری کی امید کی جا سکتی ہے.


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top