The news is by your side.

Advertisement

رحیم یارخان میں 5 افراد کا لرزہ خیز قتل، گردنیں کاٹ دی گئیں

رحیم یار خان : پتن منارہ کے علاقے میں پانچ افراد کے لرزہ خیز قتل کی واردات ہوئی ،جہاں نامعلوم ملزمان نے سفاکیت کی انتہا کرتے ہوئے ماں باپ اور تین بچوں کی گردنیں کاٹ دیں، وزیراعلیٰ پنجاب نے واقعے کا نوٹس لیکر رپورٹ طلب کرلی۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب کے ضلع رحیم یار خان میں پتن منارہ کے علاقے میں چک نمبر ایک سو پینتیس میں افسوسناک واقعہ پیش آیا ، جہاں ایک گھر سے چار افراد کی گردنیں کٹی لاشیں برآمد ہوئیں، جس میں ماں اور تین بچے شامل تھیں جبکہ زخمی باپ اسپتال پہنچ کر دم توڑ گیا۔

پولیس کے مطابق گھر کا دروازہ اندر سے بند تھا،جائے وقوعہ سے تیز دھار چھری برآمد ہوئی ہے، واقعہ بظاہر گھریلو جھگڑے کا لگتا ہے،مزید تحقیقات جاری ہیں۔

ڈیشنل انسپکٹرجنرل پولیس ظفراقبال اعوان نے رحیم یارخان میں فیملی کے قتل کا نوٹس لیتے ہوئے آرپی او بہاولپور اور ڈی پی اورحیم یار خان سے رپورٹ طلب کرتے ہوئے کہا افسوسناک واقعےکی جانچ کےبعدحقائق سامنے لائے جائیں۔

ابتدائی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ فیملی کے سربراہ نے تیز دھار آلے سے اہلخانہ کے گلےکاٹے، رام چند نے بیوی اور 2 بچوں کے قتل کے بعد خودکشی کرلی، تاہم پولیس ہرپہلو سے واقعے کی تحقیقات کرے۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے رحیم یار خان میں 5 افراد کے قتل کا نوٹس لیتے ہوئے آئی جی سے رپورٹ طلب کرلی اور افسوسناک واقعے میں ملوث ملزمان کی جلد گرفتاری کا حکم دے دیا۔

عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ قتل میں ملوث ملزمان کو فوری قانون کی گرفت میں لایاجائے، مقتولین کے لواحقین کو ہر قیمت پر انصاف فراہم کیا جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں