The news is by your side.

Advertisement

کراچی کے علاوہ سندھ کے دیگر اسپتالوں میں بھی کینسر وارڈ بنائیں گے: وزیر اعلیٰ

کراچی: وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے قومی ادارہ برائے اطفال صحت (این آئی سی ایچ) میں بچوں کے کینسر سینٹر کے دورے کے دوران کہا کہ سندھ کے دیگر اسپتالوں میں بھی کینسر وارڈ بنائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے قومی ادارہ برائے اطفال صحت (این آئی سی ایچ) میں بچوں کے کینسر سینٹر کا دورہ کیا۔ اپنے دورے کے دوران وزیر اعلیٰ نے سینٹر میں زیر علاج بچوں سے ملاقات کی۔

وزیر اعلیٰ سندھ کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ کینسر کا سینٹر چائلڈ ایڈ ایسوسی ایشن چلا رہا ہے، سینٹر 1999 سے کام کر رہا ہے۔ این آئی سی ایچ کے کینسر سینٹر میں 7 ہزار کینسر کے بچے رجسٹرڈ ہیں۔

وزیر اعلیٰ کو بتایا گیا کہ یہ 3 سال کا علاج ہے، اس میں نہ صرف پورے ملک بلکہ افغانستان کے بھی بچے رجسٹرڈ ہیں۔ علاج مکمل طور پر مفت کیا جاتا ہے اور ایک بچے کے علاج پر 4 سے 5 لاکھ کی لاگت آتی ہے۔

بریفنگ کے مطابق تمام اخراجات پیشینٹ ایڈ فاؤنڈیشن برداشت کرتا ہے۔ اس موقع پر وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ بچوں میں کینسر کے علاج کے لیے ہر قسم کی سہولت مہیا کریں گا۔

انہوں نے کہا کہ اسپتالوں سے متعلق کورٹ میں ریویو پٹیشن دائر کر چکے، اسپتالوں میں سہولیات کو مزید بہتر کریں گے۔ سندھ کے دیگر اسپتالوں میں بھی کینسر وارڈ بنائیں گے۔

بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ این آئی سی ایچ میں قائم وارڈ کا جائزہ لینے آیا تھا، دواؤں کی قیمتیں بڑھنے سے مسائل بڑھے ہیں لہٰذا بجٹ بھی بڑھائیں گے۔

انہوں نے کہا تھا کہ وزیر اعظم سے ملاقات میں کہا تھا کہ کچھ اسپتال ہمارے پاس ہی رہنے دیں، ہم عدالت میں بھی نظر ثانی پٹیشن فائل کر چکے ہیں۔ امید ہے فیصلہ ہمارے حق میں آئے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں