The news is by your side.

Advertisement

ایوان کے باہر ن لیگ اور اسمبلی سیکیورٹی کے درمیان جھگڑا

لاہور: پنجاب اسمبلی کے باہر ن لیگ اور اسمبلی سیکیورٹی کے درمیان جھگڑا ہوگیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ذرائع کا کہنا ہے کہ ایوان کے باہر ن لیگ کے پرائیویٹ افراد کی جانب سے اندر جانے پر سیکیورٹی سے جھگڑا ہوا، سیکیورٹی اہلکاروں نے انہیں اندر جانے سے روکا تھا۔

مسلم لیگ ن کے رہنما خلیل طاہر سندھو اور وزیراعلیٰ کے سیکریٹری کی سیکیورٹی سے ہاتھا پائی ہوئی۔

دوسری جانب ن لیگی رہنما رانا مشہود کا کہنا ہے کہ سیکیورٹی اہلکاروں نے ہمارے اسٹاف کو اندر جانے سے روکا ہے۔

واضح رہے کہ پرویز الہٰی یا حمزہ شہباز، تخت لاہور پر کون بیٹھے گا؟ اس کا فیصلہ اب سے کچھ دیر بعد ہوجائے گا۔

سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب کے فری اینڈ فیئر انتخاب کے لیے ووٹنگ آج جمعہ 22 جولائی کو ہوگی، وزیر اعلیٰ کے انتخاب کے لیے حکومتی اتحاد کے امیدوار حمزہ شہباز اور تحریک انصاف و اتحادی جماعت مسلم لیگ ق کے امیدوار پرویز الہٰی میں مقابلہ ہوگا۔

پنجاب اسمبلی کا اجلاس آج 4 بجے طلب کیا گیا تھا لیکن ابھی تک ووٹنگ نہیں ہوسکی ہے، ڈپٹی اسپیکر دوست محمد مزاری اجلاس کی صدارت کریں گے، ممبران اسمبلی شو آف ہینڈ کے ذریعے اپنا حق رائے دہی استعمال کریں گے۔

تحریک انصاف نے نمبر پورے ہونے کا دعویٰ کیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ 188 ارکان کی حمایت حاصل ہے جبکہ حکومتی اتحاد کی تعداد 179 ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں