The news is by your side.

Advertisement

حیرت انگیز قتل‘ تدفین کے چھ ماہ بعد مقدمہ درج

چترال : پاکستان کے دور دراز ضلع میں ہونے والے مبینہ حیرت انگیز قتل کا مقدمہ چھ ماہ بعد درج کرلیا گیا‘ تدفین کے کئی مہینے بعد قتل کا انکشاف ہوا۔

تفصیلات کےمطابق چترال ٹاؤن سے 150کلومیٹر شمال کی جانب واقع وادی یارخون کے ایک گاؤں بریپ سے تعلق رکھنے والا اسلم بیگ ولدپردوم خان اپریل 2017ء میں چھٹیوں پر گھر آیا تو پراسرا رحالات میں اس کی موت واقع ہوگئی ۔

خاندانی ذرائع کےمطابق اسلم بیگ کی شادی کو 18ماہ کا عرصہ گزرا تھا کہ 14اپریل کی رات دس بجے اچانک اس کی موت واقع ہوگئی‘ مقتول کے چچا حکیم خان نے بتایا کہ انہوں نے اہل ِ خانہ کےبلانے پر مقتول کی سانس چیک کی اور نبض پر ہاتھ رکھا تو اس کا انتقال ہوچکا تھا۔

ان کا کہنا تھاکہ ’رات کو ہمیں پتہ نہیں چلا کہ مقتول کے جسم پرتشدد کا کوئی نشان ہے لیکن جب اگلی صبح ہم جنازے کو غسل دینے لگے تو ناک ، گلے اور سینے پر زخم کے نشانات نظر آئے، ہمیں قتل کا کوئی شبہ نہیں تھا اس لئے ہم ان نشانات کو کوئی اہمیت نہیں دی۔

cold blooded murder
مقتول اسلم بیگ کی یادگار تصویر

ایک اوررشتہ دار سرور الدین نے کہنا ہے کہ ’ہمیں ان کے جسم بالخصوص ناک ، گلے اور سینے پر زخم کے نشانات نظر آئے تو ہمیں شک ٹھہرا‘ گھر والوں کے سامنے اپنے شبہ کا اظہار کیا۔ تاہم سب نےمقتول کی بیوی کے بیان پر اعتبار کیا کہ رات کو سوتے میں اچانک دل کا دورہ پڑا اور انتقال ہوگیا۔

ذرائع کے مطابق اسلم بیگ کے کفن دفن کے وقت بعض رشتے داروں نے شدید اعتراضات کئے اور اس معاملے کو قانون کے حوالے کرنے پر اسرار کیا لیکن عزت خطرے میں پڑجانےکے خوف سے جلد بازی میں لاش کو دفنا دیاگیا ۔

کچھ عرصے تک یہ افواہیں زیرِ گردش رہیں کہ اسلم بیگ کی بیوہ کے ایک پولیس اہلکار سے تعلقات تھے‘ تاہم پہلے سے شادی شدہ اس پولیس اہلکار نے مقتول کی بیوہ کو بھگا کر شادی کی تو وہ افواہیں یقین میں بدل گئیں اور گھر والوں کو یقین ہونے لگا کہ دونوں نے مل کر مقتول کو راستے سے ہٹایا ہے‘ اسی سبب واقعے کے لگ بھگ چھ ماہ بعد مبینہ قتل کا مقدمہ مستوج تھانےمیں درج کرایا گیا ہے۔

پولیس کے مطابق مقتول کے ورثا میں سے پانچ گواہان کے بیانات قلم بند کیے گئے ہیں جبکہ تفتیشی آفیسر نے قبر کشائی کے لئے عدلیہ سے رجوع کیا ہے۔ ملزمہ کو گرفتار کرکے ایف آئی آر میں نامزد ملزم پولیس اہلکار کی گرفتاری کے لئے کوششیں جاری کی ہے ۔

پولیس ذرائع نے اس بات کی بھی تصدیق کی ہے کہ اسلم بیگ کی موت سے ایک ماہ قبل سے لے کر ان کی موت کے دن تک دونوں ملزمان کے موبائل فون ڈیٹا کی جانچ پڑتال شروع کی گئی ہے اور بہت جلد سارے ثبوت سامنے لائے جائیں گے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں