The news is by your side.

Advertisement

عشق میں ناکامی پر خودکشی کرنے والے نامور پاکستانی اداکار

کراچی: پاکستانی ڈرامے الف نون سے شہرت کے بامِ عروج پر پہنچنے والے اداکار رفیع خاور عرف ’ننھا‘ کی آج 34ویں برسی منائی جارہی ہے۔

مزاحیہ اداکار ننھا نے دو جون 1986ء کو   عشق میں ناکامی کے بعد خود کو گولی مار کراپنی زندگی کا خاتمہ کیا تھا، اداکار ننھا کا اصل نام رفیع خاور تھا اور وہ 1942ء میں پنجاب کے ضلع ساہیوال میں پیدا ہوئے تھے۔

پاکستان ٹیلی وژن کے آغاز کے بعد انہوں نے کمال احمد رضوی کے پہلے ڈرامہ سیریل ’’آؤ نوکری کریں‘‘ سے اپنے فن کیریئر کا آغازکیا، اس کے بعد کمال احمد رضوی کی لازوال ڈرامہ سیریل ’’الف نون‘‘ سے ان کی شہرت کا آغاز ہوا۔

بعد ازاں سیریز میں ان کا کام دیکھ کر شباب کیرانوی نے انہیں اپنی فلم وطن کا سپاہی میں مزاحیہ کردار ادا کرنے کی پیش کش کی جسے رفیع خاور نے خوش دلی سے قبول کیا اور ایسا کام کیا کہ دو دہائی تک فلمی دنیا میں بطور مزاحیہ اداکار اُن کا ہی ڈنکا بجتا رہا۔

انہوں نے اردو، پنجاب، پشتو اور سندھی فلموں میں کام کیا، اپنے کیریئر کے دوران ننھا نے مجموعی طور پر391 فلموں میں کام کیا۔

بطور اداکار ان کی آخری فلم ’’ہم سے نہ ٹکرانا تھی‘‘ جبکہ ان کی آخری ریلیز ہونے والی فلم کا نام ’’پسوڑی بادشاہ‘‘ تھا۔

زندگی کے آخری ایام میں اداکار ننھا، فلمی اداکارہ نازلی کی زلف کے اسیر ہوگئے تھے اور  اسی عشق میں ناکامی کے بعد 2 جون 1986ء کو انہوں نے خود کو گولی مار کر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔ وہ علامہ اقبال ٹاؤن، لاہورمیں کریم بلاک کے قبرستان میں آسودۂ خاک ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں