The news is by your side.

Advertisement

نثار کو ٹکٹ دینے کے معاملے میں شریف برادران میں اختلاف

پارٹی صدر شہباز شریف چوہدری نثار کو ووٹ دینے کے حق میں، پارٹی قائد نواز شریف خلاف

لاہور: چوہدری نثار کو ٹکٹ دینے کے معاملے پر نواز شریف اور شہباز شریف میں اختلافات کھل کر سامنے آگئے.

تفصیلات کے مطابق چوہدری نثار کو ٹکٹ دینے کا ایشو پارلیمانی بورڈ میں سنگین شکل اختیار کر گیا. چھوٹے اور بڑے میاں صاحب کے اختلافات عیاں ہوگئے.

اطلاعات کے مطابق مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف ٹکٹ دینے کے حق میں ہیں، جب کہ سابق وزیر اعظم اور پارٹی قائد نواز شریف اس کے خلاف ہیں. ذرایع کے مطابق اکثریت میاں نواز شریف کے ساتھ ہے.

یاد رہے کہ کاغذات نامزدگی جمع کروانے میں‌ فقط دو دن باقی ہیں، مگر دیگر پارٹیوں کے برعکس مسلم لیگ ن کے امیدواروں‌ کا حتمی فیصلہ تاحال نہیں ہوسکا.

لاہور سے صرف شہبازشریف، حمزہ شہباز اور سعد رفیق کا حتمی فیصلہ سامنے آیا ہے۔ ابتدا میں این اے 125 سے مریم نواز کا نام لیا جارہا تھا، تاہم اب کہا جارہا ہے کہ اس حلقے سے ایاز صادق الیکشن لڑیں گے.

پارٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ شہبازشریف لاہور اور دیگر دو حلقوں سے الیکشن لڑیں گے، مریم نوازکو کراچی سے بھی الیکشن لڑانے کی تجویز سامنے آئی ہے.

پارلیمانی بورڈ نے فیصلہ کیا ہے کہ امیدواروں کا حتمی اعلان اتوار کو ہوگا، ٹکٹ حاصل کرنے کی پہلی شرط وفاداری ہے، ن لیگ امیدواروں کے ناموں کا اعلان دو مرحلوں میں کرے گی.


شبہاز شریف کو بچپنے کا احساس نہیں، چوہدری نثار کا رد عمل


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں