site
stats
پاکستان

تنازعات کا خاتمہ کیے بغیرانسانی اسمگلنگ ختم نہیں ہوسکتی: ملیحہ لودھی

نیویارک: امریکہ میں مقیم پاکستانی مندوب ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ تنازعات کو ختم کیے بغیرانسانی اسمگلنگ کوختم نہیں کیا جاسکتا ہے، پاکستان 4 دہائیوں سےافغان بھائیوں کی مہمان نوازی کررہا ہے.

تفصیلات کے مطابق سلامتی کونسل میں انسانی اسمگلنگ کی روک تھام سےمتعلق مباحثہ کا انعقاد کیا گیا، پاکستانی مندوب ملیحہ لودھی کا مباحثے میں اظہارخیال کرتے ہوئے کہا کہ تنازعات کو ختم کیے بغیرانسانی اسمگلنگ کوختم نہیں کیا جاسکتا ہے، انہوں پاک افغان تعلقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان 4 دہائیوں سےافغان بھائیوں کی مہمان نوازی کررہا ہے.

پاکستانی مندوب کا کہنا ہے کہ پاکستان نے انسانی اسمگلنگ روکنے کے لیے متعدد اقدامات کیے، مباحثہ میں پاکستانی مندوب نے بچوں اورخواتین کے تحفظ کی ضرورت پرزور دیا۔

شام کی خواتین خطرے میں

یاد رہے کہ گذشتہ سال انسانی اسمگلنگ کے خلاف تحفظ کے عالمی دن کے موقع پر ہیومن رائٹس واچ کی جانب سے جاری کیے جانے والے اعداد و شمار کے مطابق شام میں جاری جنگ کے باعث شامی خواتین کو بے شمار خطرات کا سامنا ہے جن میں سرفہرست ان کی اسمگلنگ اور جنسی مقاصد کے لیے استعمال ہے۔

واضح رہے کہ ڈاکٹر ملیحہ لودھی اقوام متحدہ میں پاکستان کی پہلی خاتون مستقل مندوب ہیں، انہوں نے امریکہ میں پاکستان کی سفیر کی حیثیت سے 1993 سے 1996 اور 1999 سے 2002 تک خدمات انجام دی ہیں جبکہ وہ 2003 سے 2008 برطانیہ میں پاکستان کی ہائی کمشنر رہی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top