The news is by your side.

Advertisement

تعمیراتی سرمایہ کاری پر صرف10فیصد ٹیکس لیا جائے گا

اسلام آباد : وزیراعظم کی معاون خصوصی اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ سیمنٹ اور اسٹیل کے سوا تمام تعمیراتی شعبوں پر ود ہولڈنگ ٹیکس ختم کردیا گیا، سرمایہ کاری پر صرف10فیصد ٹیکس لیا جائے گا۔

یہ بات انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہی، انہوں نے کہا کہ نیا پاکستان ہاؤسنگ پروگرام میں سرمایہ کاری کرنے والوں سے صرف 10 فیصد ٹیکس لیا جائے گا جبکہ 90 فیصد ٹیکس رعایت دی جارہی ہے۔

تعمیرات کے شعبے کی ترقی محنت کشوں، مزدوروں کی ترقی ہے۔ معاون خصوصی اطلاعات نے کہا کہ فردوس عاشق اعوان کا اپنے ٹوئٹ میں مزید کہنا ہے کہ تعمیراتی شعبے کیلئے مراعاتی پیکج اور صنعت کا درجہ دینے سے دیگر صنعتوں کو فروغ ملے گا۔

وزیراعظم کا یہ اقدام امیدنو اور ترقی کا پیغام ہے۔ مزدور طبقے سے سرمایہ دار برادری سب اس سے استفادہ حاصل کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ فکسڈ ٹیکس کا مطالبہ تسلیم کرتے ہوئے سیمنٹ اور سٹیل انڈسٹری کے سوا تمام تعمیراتی شعبوں پر ودہولڈنگ ٹیکس ختم کردیا گیا ہے۔ تعمیراتی شعبے کیلئے پیکج اور صنعت کا درجہ دینے سے دیگرصنعتوں کو فروغ ملے گا، اس شعبے کے تحریک پانے سے دیگر صنعتوں کو نئی زندگی ملے گی، ہنرمند اورغیرہنر مند محنت کش مستفید ہوں گے۔

فردوس عاشق اعوان کا اپنے پیغام میں کہنا تھا کہ وزیراعظم کا یہ اقدام امید نو اور ترقی کا پیغام ہے، مزدور اور سرمایہ دار طبقہ سب استفادہ حاصل کریں گے،

ان کا مزید کہنا تھا کہ فکسڈ ٹیکس کا مطالبہ تسلیم کیا گیا، سیمنٹ اور اسٹیل کے سوا تمام تعمیراتی شعبوں پر ود ہولڈنگ ٹیکس ختم کردیا گیا، یہ پیکیج تعمیر وطن، ملکی خوشحالی اور روزگار کے مواقع میں اہم سنگ میل ثابت ہوگا۔

فردوس عاشق اعوان کا اپنے ٹوئٹ میں کہنا تھا کہ نیا پاکستان ہاؤسنگ پروگرام میں سرمایہ کاری پر صرف10فیصد ٹیکس لیا جائے گا،90فیصد ٹیکس رعایت دی جارہی ہے، تعمیرات کے شعبے کی ترقی محنت کشوں، مزدوروں کی ترقی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں