The news is by your side.

Advertisement

سندھ میں برآمدی فیکٹریاں کھلنے کا سلسلہ جاری، مزید 86 یونٹس کو اجازت مل گئی

کراچی: سندھ میں برآمدی فیکٹریاں کھلنے کا سلسلہ جاری ہے، مزید 86 صنعتی یونٹس کو اجازت مل گئی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق محکمہ داخلہ سندھ نے مزید 86 برآمدی فیکٹریوں کو کام کرنے کی اجازت دے دی، برآمدی یونٹس کھولنے کے لیے کراچی کے 7 صنعتی علاقوں سے فیکٹریوں کے مالکان نے اجازت طلب کی تھی، جس پر محکمہ داخلہ نے مزید 86 برآمدی فیکٹریوں کو جمع کرائی گئی انڈر ٹیکنگ کے تحت کام شروع کرنے کی اجازت دے دی۔

لاک ڈاؤن کے دوران صنعت کاروں کی مشکلات کو مدنظر رکھتے ہوئے حکومت سندھ نے ٹیکسٹائل سمیت متعدد مزید 86 برآمدی صنعتوں کو معیاری آپریٹنگ طریقہ کار کے تحت کھولنے کی اجازت دی تاکہ وہ برآمداتی آرڈرز کو پورا کر سکیں-

تمام فیکٹریوں پر کرونا وائرس سے بچاؤ کے لیے ایس و پیز پر عمل کرنا لازمی ہوگا، اس سے پہلے 151 برآمدی کمپنیوں کو اجازت مل چکی ہے، محکمہ داخلہ کی جانب سے اب تک 237 برآمدی یونٹس کو مشروط کام کرنے کی اجازت دی ہے۔ نوٹیفیکیشن کے مطابق یہ تمام برآمدی یونٹس کراچی کے مختلف صنعتی علاقوں میں واقع ہیں۔

کراچی: مزید 82 برآمدی فیکٹریوں کو کام کرنے کی اجازت مل گئی

ایس او پیز پر عمل کی ذمے داری کمپنیوں کے مالکان پر ہوگی، کمپنیوں پر ایس او پیز کے حوالے سے چیک اینڈ بیلنس رکھا جائے گا، جمع شدہ حلف نامے کی خلاف ورزی پر برآمدی صنعتوں کے خلاف کارروائی بھی کی جائے گی۔ فیکٹریوں کو اجازت دینے سے قبل TDAP سے کمپنیوں کے برآمدی آرڈرز بھی چیک کیے گئے۔

کمپنیاں اس بات کی پابند ہوں گی کہ ملازمین کا درجہ حرارت چیک کریں، انھیں ماسک اور سینیٹائزر فراہم کریں اور فیکٹری کی حدود میں سماجی فاصلے کے ضابطے پر عمل کرائیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں