The news is by your side.

Advertisement

متنازع تقریر: نہال ہاشمی کے خلاف تحقیقات کا حکم

کراچی: ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج نے نہال ہاشمی کی متنازع تقریر کے خلاف پولیس کو قانون کے مطابق تحقیقات کا حکم جاری کردیا۔

تفصیلات کے مطابق نہال ہاشمی کی دھمکی آمیز تقریر کے خلاف انسداد دہشت گردی کی عدالت میں مقدمات درج کرنے کے حوالے سے دائر درخواست کی سماعت ہوئی، ضلع شرقی کے جج نے پولیس کو نہال ہاشمی کے خلاف تحقیقات کا حکم جاری کیا۔

نہال ہاشمی کی تقریر سے متعلق دائر درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ نہال ہاشمی نے عدلیہ کو دھمکیاں دیں، اس لیے اُن کے خلاف دہشت گردی دفعات کے تحت مقدمات درج کیا جائے۔

سماعت کے دوران تفتیشی افسر نے عدالت کو آگاہ کیا کہ ابھی تقریر کے حوالے سے تحقیقات جاری ہیں اس لیے حتمی رپورٹ جمع نہیں کروائی گئی، اگر تحقیقات کے دوران ملزم کے خلاف شواہد ملے تو ضابطہ فوجداری کی دفعہ 173 کے تحت ایف آئی آر کا اندراج کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ نہال ہاشمی نے گزشتہ دنوں یوم تکبیر کے موقع پر مسلم لیگ ن کی جانب سے منعقدہ تقریب میں خطاب کرتے ہوئے جے آئی ٹی افسران کو دھمکیاں دی تھیں، جس کے بعد وزیراعظم نے انہیں طلب کر کے صفائی مانگی۔

نہال ہاشمی جب وزیراعظم کو مطمئن نہ کرسکے تو نوازشریف نے انہیں سینیٹ کی نشست سے استعفیٰ دینے کی ہدایت کی اور پارٹی کی بنیادی رکنیت ختم کر دی تھی، نہال ہاشمی نے سینیٹ کی نشست سے استعفیٰ دے دیا تھا تاہم چیئرمین سینیٹ کے روبرو پیش ہوکر انہوں نے استعفیٰ منظور نہ کرنے کی درخواست کی جس کے بعد اُسے منظور نہیں کیا گیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں