The news is by your side.

Advertisement

کرونا بحران، برطانوی حکومت طبی عملے کو حفاظتی سامان مہیا کرنے میں ناکام

لندن : برطانوی حکومت کو حفاظتی سامان کی کمی کے باعث تنقید کا سامنا کرنا پڑرہا ہے، این ایچ ایس کا کہنا ہے کہ فرنٹ لائن اسٹاف (طبی عملہ) مایوسی کا شکار ہے۔

تفصیلات کے مطابق برطانیہ بھی کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ ممالک کی فہرست میں شامل ہے جہاں متاثرہ افراد کی تعداد 1 لاکھ 20 ہزار سے زائد ہوچکی ہے لیکن حکومت میڈیکل اسٹاف کو حفاظتی سامان مہیا کرنے میں ناکام نظر آرہی ہے۔

برطانوی طبی عملہ پی پی ای کی کمی کے باعث حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بنا رہا ہے،حفاظتی سامان کی کمی کے باعث فرنٹ لائن اسٹاف میں سخت تشویش پائی جاتی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ترکی سے آج آنے والا حفاظتی سامان بھی برطانیہ نہ پہنچ سکا، جس پر نیشنل ہیلتھ سروسز نے حکومت اقدامات پر سوالات اٹھا دئیے ہیں۔

انتظامیہ کا کہنا ہے کہ فرنٹ لائن اسٹاف مایوسی کا شکار ہے، پی پی ای نہ ملنے پر کام سے انکار بھی کیا جاسکتا ہے۔

حکومتی وزیر نے این ایچ ایس انتظامیہ کے سوالات پر میڈیا کو بتایا کہ آج ترکی سے 84 ٹن حفاظتی سامان پہنچنا تھا جو کچھ وجوہات کی بنا پر نہیں پہنچ سکا۔

کرونا وائرس سے نمٹنے کےلیے برطانوی حکومت کے اقدامات کا یہ حال ہے کہ دو ماہ تک حکومت وائرس سے فرنٹ لائن پر لڑنے والے طبی عملے کو ٹیسٹ نہیں کرسکی اور نہ ہی مناسب حفاظتی سامان مہیا کیا جاسکتا ہے۔

کرونا وائرس کے باعث برطانوی معیشت شدید مشکلات سے دوچار

جس کی وجہ سے طبی عملے کے ٹیسٹ کے آغاز سے ہی لندن کے ایک ہی ہسپتال کے 73 افراد میں کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی جبکہ 318 افراد آئیسولیشن میں چلے گئے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں