The news is by your side.

Advertisement

بھارتی شہری بے قابو : کورونا مریض کا علاج کرنے والی لیڈی ڈاکٹر پر تشدد

نئی دہلی : بھارت میں کورونا مریضوں کی دیکھ بھال پر مامور لیڈی ڈاکٹر کو مشتعل افراد نے تشدد کا نشانہ بنایا، ساتھی ڈاکٹروں نے بچانے کی کوشش کی تو ان کو بھی گھیر لیا، طبی عملے نے چھپ کر جان بچائی۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی دارالحکومت دہلی کے لوک نائک اسپتال میں ایک خاتون ڈاکٹر کے ساتھ بد سلوکی کا واقعہ سامنے آیا ہے۔

اس حوالے سے بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ خاتون ڈاکٹر کورونا وائرس کے متاثرہ مریض کے علاج میں مصروف تھی کہ اسی دوران مریض اور اس کے اہل خانہ نے اس کے ساتھ تلخ کلامی شروع کردی اور اسے تشدد کا نشانہ بنایا۔

اس دوران جب دیگر مرد ڈاکٹر اس لیڈی ڈاکٹر کو بچانے آئے تو مریضوں نے انہیں بھی گھیر لیا، مریضوں اور اہل خانہ کے تشدد کو دیکھ کر ڈاکٹر اور نرسنگ عملہ اپنی جان بچانے کے لئے ڈیوٹی روم میں چھپ گیا اور فوری طور پر سیکیورٹی اہلکاروں کو فون کیا جس پر سیکیورٹی اہلکاروں نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر مشتعل افراد کو باہر نکال دیا۔

واضح رہے کہ دہلی میں کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے، دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کجریوال نے گزشتہ روز ایک پریس کانفرنس میں کہا تھا کہ پچھلے کچھ دنوں میں کورونا کیسز بہت تیزی سے بڑھ رہے ہیں جو کہ ایک تشویشناک بات ہے۔

مزید پڑھیں: بھارت میں علاقہ مکینوں نے طبی عملے کی پٹائی کردی

یاد رہے کہ اس سے قبل بھی بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں ڈاکٹروں پر حملے رکنے کا نام نہیں لے رہے اندور کے بعد اب ضلع اجین کے بلوٹی پورا علاقے میں کورونا مریضوں کی جاچ پڑتال کے لیے طبی ٹیم پہنچی تو لوگوں نے اس کا محاصرہ کرکے پٹائی کردی۔ اندور کے ٹاپ پٹی علاقے میں بھی ڈاکٹروں کی ٹیم اور پولیس اہلکاروں کے ساتھ بدسلوکی کی گئی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں