The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ: کروناوائرس کی آڑ میں اوباش لڑکوں نے شہریوں کو تنگ کرنا شروع کردیا

لندن: برطانیہ میں متعلقہ اداروں کو ایسے اوباش لڑکوں کی شکایات موصول ہوئی ہیں جو اپنی جیب گرم کرنے کے لیے شہریوں کو گھر گھر جاکر تنگ کر رہے ہیں۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق برطانیہ میں کروناوائرس کی آڑ لے کر مذکورہ لڑکے ماسک اور دیگر اشیاء فروخت کررہے ہیں جبکہ نہ خریدنے پر زور زبردستی بھی کی جارہی ہے۔

برطانیہ کے علاقے اسٹیفورڈ شائر میں ایک رہائشی کا کہنا ہے کہ ایک نوجوان نے گھر پر دستک دی۔ بعد ازاں اس نے ماسک اور دستانے خریدنے پر زور دیا میری بیوی کے منع کرنے پر اس نے دروازے پر ٹانگ رکھ دی اور بدتمیزی بھی کی۔ ملزمان کی گرفتاری تاحال عمل میں نہیں آئی۔

پاؤل نامی شہری نے ایک اوباش لڑکے کی تصویر سوشل میڈیا پر شیئر کی جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ملزم نے ماسک لگا رکھا ہے جس کا مقصد کروناوائرس سے بچنے سمیت اپنی شناخت چھپانہ بھی ہے۔

کرونا: شادی کی تقریب میں دلہا دلہن سمیت صرف 5 لوگوں کو شرکت کی اجازت

ان کا کہنا تھا کہ لڑکے کروناوائرس سے بچاؤ کی اشیاء سمیت خانے پینے کی بھی چیزیں فروخت کررہے ہیں۔ یہ صرف ایک لڑکے کی تصویر سامنے آئی ہے جبکہ اس کام میں مزید افراد بھی ملوث ہیں۔

برطانیہ میں 31 نئے کیسز رپورٹ ہونے کے بعد مہلک وائرس کے مریضوں کی تعداد 3 ہزار 269 ہوچکی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں