The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس: سعودی ڈاکٹر کا بڑا کارنامہ، ماہرین حیران

ریاض: سعودی عرب کے ڈاکٹرز نے کرونا وائرس ٹیسٹ کا انتہائی آسان طریقہ دریافت کرلیا، اس کے ذریعے 100 فیصد نتائج منٹوں میں حاصل کیے جا سکتے ہیں۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق شاہ عبد العزیز یونیورسٹی کے سعودی اسپیشلسٹ ڈاکٹر نے کرونا وائرس ٹیسٹ کا انتہائی آسان طریقہ دریافت کرلیا، کامیاب تجربے کے بعد ایجاد کو امریکی پیٹنٹ اینڈ ٹریڈ مارک آفس میں رجسٹر بھی کر لیا گیا ہے۔

شاہ عبدالعزیز یونیورسٹی کے اسپیشلسٹ ڈاکٹر ہانی الحضرمی نے بتایا کہ کووڈ 19 وائرس کے ٹیسٹ کے لیے اب تک پی سی آر ہی واحد معتبر ذریعہ تھا تاہم اس ٹیسٹ میں کافی وقت لگتا تھا جبکہ ٹیسٹ کروانے والے کے لیے بھی کئی دشوار گزار مراحل تھے۔

ڈاکٹر ہانی نے مزید بتایا کہ جو طریقہ انہوں نے ایجاد کیا ہے اس کے ذریعے 100 فیصد نتائج منٹوں میں حاصل کیے جا سکتے ہیں جبکہ اس میں لاگت بھی اتنی نہیں ہوتی۔

ٹیسٹ کے لیے جو آلہ استعمال کیا جائے گا اسے کسی بھی جگہ لے جایا جاسکتا ہے اور اس سے حاصل ہونے والے نتائج فوری طور پر سامنے آجاتے ہیں۔

ڈاکٹر ہانی کا مزید کہنا تھا کہ ان کی ایجاد کردہ ڈیوائس عمرہ زائرین اور مملکت میں آنے والوں کے لیے کافی مفید ثابت ہوگی جس کا اہم ترین عنصر وقت ہے کیونکہ ڈیوائس فوری طور پر کرونا وائرس ٹیسٹ کی رپورٹ سے آگاہ کردیتی ہے۔

کرونا وائرس ٹیسٹنگ کٹ کی ایجاد کے حوالے سے ڈاکٹر ہانی کا کہنا تھا کہ سب سے زیادہ خوشی اس بات کی ہے کہ یہ ایجاد مکمل طور پر ہماری ہے، کسی بھی مرحلے میں ہم نے بیرونی ماہرین کی خدمات حاصل نہیں کیں۔

انہوں نے مزید بتایا کہ انہوں نے اپنی ایجاد کو امریکی ادارے برائے ایجادت کے سامنے پیش کیا جس پر انہیں کامیابی کی سند بھی دی گئی، ساتھ ہی اس ایجاد کو رجسٹرڈ بھی کرلیا گیا۔

ٹیسٹنگ کے حوالے سے ڈاکٹر ہانی کا کہنا تھا کہ یہ انتہائی مختصر سی ڈیوائس ہے جسے ہوائی اڈوں، بری سرحدی چوکیوں، بندرگاہوں، مارکیٹس یا عوامی مقامات پر اسے رکھا جا سکتا ہے جہاں کسی کا بھی کرونا وائرس ٹیسٹ منٹوں میں کیا جانا ممکن ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں